اوپرا ونفری: بھارت پر شو کو تنقید کا سامنا

تصویر کے کاپی رائٹ official website
Image caption سنہ دو ہزار دس میں بین الاقوامی جریدے فوربز کی طرف سے دنیا کی سو مشہور ترین شخصیات کی فہرست میں امریکی ٹی وی میزبان اوپرا ونفری اول نمبر پر تھیں۔

جنوری میں معروف ٹی وی شخصیت اوپرا ونفری کے بھارت کے دورے کے بارے میں ایک پروگرام کو شدید تنقتد کا سامنا ہے۔

’اوپراز نیکسٹ چیپٹر‘ نامی پروگرام کو ایک بھارتی تجزیہ کار نے ’لا علم اور جاہلانہ‘ جبکہ دوسرے نے ’پرُ تکبر‘ کہا۔

’دی ڈیلی بھاسکر‘ نامی ویب سائٹ کا کہنا تھا کہ اس پروگرام کو ناقص انداز میں فلمایا گیا اور اس کا سکرپٹ انتہائی برا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس پروگرام میں بھارت کو ایک منفی انداز میں دیکھایا گیا ہے۔

اٹھاون سالہ اوپرا ونفری کے اس بیان پر خاص طور پر تنقید کی گئی جس میں انہوں نے بھارت میں روایتی طور پر ہاتھوں سے کھانا کھانے کا ذکر کیا۔

ممبئی میں ایک فیملی کے ساتھ رات کے کھانے میں شرکت کرتے ہوئے انہوں نے کہا ’مجھے پتا چلا ہے کہ بھارتی لوگ اب تک ہاتھوں سے کھانا کھاتے ہیں‘۔

سی این این آئی بی این نیوز چینل کی بلاگر ریتو پارنا چیترجی کا کہنا تھا ’ہاتھوں سے کھانا ہماری روایت ہے جس پر ہم میں سے کوئی بالکل شرمندہ نہیں‘۔

انہوں نے کہا کہ پوری دنیا میں دیکھائے جانے والے پروگرام میں ایک ذمہ دار معروف شخصیت ہونے کے ناتے انہیں پروگرام سے پہلے مکمل تحقیق کرنی چاہیے تھی۔

اوپرا ونفری نے اپنے ایک ہفتے کے بھارتی دورے میں بالی وڈ کی اہم شخصیات سے ملاقات کے علاوہ جے پور میں ایک ادبی میلہ اور آگرہ میں تاج محل دیکھا۔

یہ پروگرام امریکہ میں اپریل میں نشر کیا گیا تھا تاہم بھارت میں یہ اختتامِ ہفتہ پر دیکھایا گیا۔

اسی بارے میں