’ماؤس ٹریپ‘ کے ساٹھ برس مکمل

آخری وقت اشاعت:  پير 19 نومبر 2012 ,‭ 13:07 GMT 18:07 PST
ما‎ؤس ٹریپ شو کے اداکار

’ماؤس ٹریپ‘ کا سٹیج ؟رامہ اگاتھا کرسٹی کی ایک کہانی پر مبنی ہے

برطانوی ادیب اگاتھا کرسٹی کی ایک کتاب پر مبنی مشہور ڈرامے ’ما‎ؤس ٹریپ‘ کے سٹیج ہونے کے ساٹھ برس مکمل ہونے پر لندن میں اس ڈرامے کا ایک خصوصی شو منعقد کیا گیا۔

یہ خصوصی شو لندن کے سینٹ مارٹنز تھئیٹر میں ہوا اور اس میں پیٹرک سٹیورٹ، ہیو بونیویل اور مرینڈا ہارٹ سمیت کئی مشہور اداکاروں نے حصہ لیا۔

اس موقع پر تھیٹر کے علاقے میں اگاتھا کرسٹی کے نام ایک یادگار کتبے کا بھی افتتاح کیا گیا اور شو کے ساتھ اگاتھا کرسٹی کی یاد میں ایک تقریب بھی منعقد ہوئی۔

اگاتھا کرسٹی کے اس ڈرامے کا پہلا سٹیج شو لندن کے ویسٹ اینڈ کے علاقے کے ایک تھیٹر میں انیس سو باون میں ہوا تھا۔

ماؤس ٹریپ دنیا کا پہلا ڈرامہ ہے جو سٹیج پر گزشتہ ساٹھ برس سے جاری ہے۔ اس ڈرامے کی پچیس ہزار سٹیج شو ہو چکے ہیں۔

خصوصی شو کےموقع پر اگاتھا کرسٹی کے پوتے میتھو پرچرڈ موجود بھی تھے۔ میتھو پرچرڈ نے بتایا کہ ان کی نویں سالگرہ پر ان کی نانی نے انہیں اس ڈرامے کی رائلٹی تحفے کے طور پر انہیں دی تھی۔

اس خصوصی شو میں اداکاروں کو پورے ڈرامے کو زبانی یاد کرنے کے لیے چوبیس گھنٹے سے بھی کم وقت ملا تھا۔

شو میں حصہ لینے والی بیشتر ہستیوں نے اس بات کا اعتراف کیا کہ انہوں نے اس پہلے یہ ڈرامہ کبھی نہیں دیکھا تھا۔

اس شو میں تفتیش کار سرجنٹ ٹروٹر کا کردار ادا کرنے والے اداکار نکولس فیرل کا کہنا تھا ’اس ڈرامے کی سب سے مشکل یا یہ کہیں دلچسپ بات یہ ہے کہ اس میں بہت انٹری اور ایگزٹ کی ہدایات ہیں اور اس ميں مناظر بہت جلدی جلدی بدلتے ہیں‘۔

ماؤس ٹریپ ایک جاسوسی اور سنسنی خیز ڈرامہ ہے۔ اکثر اس ڈرامے کے شو کے بعد شائقین سے درخواست کی جاتی ہے کہ وہ اس ڈرامہ کے ’اینڈ‘ یعنی اختتام کے بارے میں کسی کو نہ بتائیں۔

’ماؤس ٹریپ‘ ڈارمے کے اس خصوصی شو کا مقصد ’ماؤس ٹریپ تھیٹر پروجیکٹس‘ کے لیے رقم جمع کرنا تھا۔ ان پروجیکٹس کا مقصد تھیٹر کو نوجوانوں اور ذہنی و جسمانی طور پر معذور بچوں کے قریب لے جانا ہے تاکہ وہ تھیٹر کی دنیا کا حصہ بن سکیں۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔