ملکہ شیراوت سے کیوں نالاں ہیں پروڈیوسر

آخری وقت اشاعت:  جمعـء 14 دسمبر 2012 ,‭ 00:17 GMT 05:17 PST
بالی ووڈ اداکارہ ملکہ شیراوت

ملکہ شیراوت کا رول اب جیانا خان کو دیا گیا جن کا تعلق افغانستان سے ہے

بالی وڈ اداکارہ ملکہ شیراوت اپنے کیریئر میں اب تک فلموں کی وجہ سے کم اور تنازعات کی وجہ سے زیادہ سرخیوں میں رہی ہیں۔ ایک بار پھر ان کے نام کے ساتھ ایک تنازع جُڑ گیا ہے۔

فلم ہدایتکار اور اداکار سچن جوشی نے ملکہ پر غیر ذمے دار ہونے کا الزام لگایا ہے جن کی فلم ’ممبئی مرر‘ جلد ہی ریلیز ہونے والی ہے۔

ممبئی میں نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے سچن نے کہا کہ ’میں نے جب ملکہ سے ’ممبئی مرر‘ میں کام کرنے کی بات کی تو انہوں نے بہت دلچسپی دکھائی اور کام کرنے کے لیے راضی ہو گئیں اور کچھ ایڈوانس بھی لے لیا۔ لیکن فلم کی شوٹنگ شروع ہونے سے ذرا پہلے انہوں نے کہہ دیا کہ وہ اس فلم میں کام نہیں کر سکتیں۔‘

سچن نے کہا کہ فلم کی شوٹنگ شروع ہونے سے ذرا پہلے اس طرح انکار کرنا انتہائی غیر ذمے دارانہ رویہ ہے۔

سچن کا کہنا ہے کہ ملکہ نے ان سے جو ایڈوانس لیا تھا وہ بھی واپس نہیں کیا اور اب ان کا فون بھی نہیں اٹھا رہی ہیں۔

سچن نے کہا کہ انہوں نے ملکہ کی اس حرکت کے بعد پروڈیوسرز کونسل میں شکایت بھی درج کروائی ہے۔

بی بی سی نے جب اس بارے میں ملکہ کے مینیجر سے رابطہ کرنے کی کوشش کی تو ان کی جانب سے کوئی جواب نہیں آیا۔

بعد میں ملکہ شیراوت کا رول جیانا خان کو دیا گیا جن کا تعلق افغانستان سے ہے۔

سچن جوشی اس سے پہلے ’اذان‘ نام کی فلم بنا چکے ہیں۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔