’ہالی وڈ میں کام اچھا فنکار ہونے کی دلیل نہیں‘

آخری وقت اشاعت:  بدھ 26 دسمبر 2012 ,‭ 16:25 GMT 21:25 PST

ہالی وڈ میں ہمارا بہت ہی کم استعمال ہوتا ہے اور کوئی اچھا اور بڑا کردار نہیں ہوتا: پاریش راول

جہاں بالی وڈ کے اداکار ہالی وڈ میں کام کرنے کے لیے بے چین رہتے ہیں، وہیں اداکار پاریش راول کے لیے ایسا کرنا مشکل ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ یہ ضروری نہیں ہے وہ ہالی وڈ میں کام کر کے ہی اچھے اداکار کہلائیں ’ کیونکہ میں ہالی وڈ جاؤں گا تبھی اچھا اداکار بنوں گا ایسا ضروری نہیں ہے‘۔

ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ ’مجھے نہیں لگتا کہ ہالی وڈ میں ایسی تبدیلی آئی ہے کہ بھارتی اداکاروں کو اہم کردار دے کر کوئی فلم بنائی جائے‘۔

پاریش راول کے ہم عصر اداکاروں اوم پوري اور نصیرالدین شاہ نے ہالی وڈ میں کام کیا ہے۔ اس سلسلے میں ان کا کہنا ہے کہ ’عرفان وہاں کام کرتے رہتے ہیں، نصیر اور اوم نے بھی کیا ہے لیکن اس کے باوجود وہاں پر ہمارا بہت ہی کم استعمال ہوتا ہے۔ کوئی اچھا اور بڑا کردار نہیں ہوتا‘۔

پاریش کے مطابق فی الحال ان کی آنے والی ہندی فلم ٹیبل نمبر 21 میں وہ ایک اہم کردار میں نظر آئیں گے۔ ان کا کہنا ہے کہ ’میرے لیے فلم کی کہانی بہت معنی رکھتی ہے جو اس فلم میں ہے‘۔

پاریش اپنی فلموں کی تشہیر میں بھی عام طور پر کم ہی دکھائی دیتے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ ’تشہیر کے لیے کسی شاپنگ مال میں جا کر ہاتھ ہلا دینے سے بات نہیں بنتی۔ لوگ ستاروں کو دیکھنے تو آئیں گے مگر ضروری نہیں کہ وہ ٹکٹ بھی خریدیں گے‘۔

پاریش کی نئی فلم ٹیبل نمبر 21، چار جنوری کو ریلیز ہوگی۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔