’ماں کے دودھ پینے والے بچوں کا مستقبل روشن‘

ایک رپورٹ کے مطابق جن بچوں کو ماں کا دودھ ملتا ہے مستقبل میں ان کے لیے معاشرے میں بہتر ترقی اور ملازمتیں ملنے کے امکانات زیادہ ہوتے ہیں۔

ماضی میں بچوں کے لیے ماں کے دودھ کے جو فوائد بتائےگئے تھے ان میں بچوں کے ذہن پر مثبت اثرات اور کسی بھی طرح کے انفیکشن سےلڑنے کی صلاحیت کا ذکر تھا۔

تازہ جائزے کے مطابق ماں کا دودھ واقعی بچے پر دورس اثرات چھوڑتا ہے۔

برطانیہ میں یونیورسٹی کالج آف لندن کی جانب سے ہونے والے جائزے میں لوگوں کی سماجی کارکردگی پر ماں کے دودھ کے اثرات کا جائزہ لیا گیا۔

اس جائزے میں سماجی کارکردگی کی پیمائش کی گئی اور والدین کی ملازمت سے ان کے بچوں کی ملازمت کا موازنہ کیا گیا۔

تحقیق کاروں نے 1958 اور1970 کے درمیان پیدا ہونے والے بچوں کے ایک گروپ پر تحقیق کی گئی جس میں یہ معلوم کیا گیا کہ کن بچوں کو ماں کا دودھ دیاگیا تھا اور تیس سال بعد ان کی سماجی حیثیت کا جائزہ لیا گیا۔

اس تحقیق کے مطابق ماں کا دودھ پینے والے بچے معاشرے میں کامیاب رہے اور انہیں اپنے والدین کے مقابلے روزگا ر اور ترقی کے بہتر مواقع ملے اور جن لوگوں کو ماں کا دودھ نہیں ملا تھا وہ نسبتاً اتنے کامیاب نہیں رہے۔

ماں کا دودھ پینے والے بچوں نے ذہنی دباؤ کے ٹیسٹ میں بھی بہتر کارکردگی دکھائی۔

رپورٹ کے مطابق بچوں کو دودھ پلانے کاعمل صرف بچوں کے لیے ہی نہیں ماں کے لیے بھی فائدہ مند ہے۔اس سے ماں کو چھاتی کا سرطان ہونے کے امکانات کم ہوتے ہیں، ہر روز پانچ سو کیلوریز کم ہونے سے آسانی سے وزن کم ہوتا ہے اور دودھ کا خرچ بچتا ہے۔

رپورٹ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ماں کا دودھ ماں اور بچے کے درمیان بہتر تعلق کو فروغ دیتا ہے۔

اسی بارے میں