بالی وڈ راؤنڈ اپ

غصے میں ہیں قطرینہ کیف

Image caption رنبیر کپور اور قطرینہ کیف کی بعض تصاویر کے متعلق آج کل کافی باتیں ہورہی ہیں

گزشتہ دنوں سپین میں ایک بیچ پر رنبیر کپور کے ساتھ چھٹی مناتي ہوئی قطرینہ کیف کی تصاویر انٹرنیٹ پر لیک ہوگئی جس سے وہ بہت ناراض ہیں۔ ان تصاویر میں کیٹ بکنی پہنے ہوئی ہیں جبکہ رنبیر بھی کم کپڑوں میں ان کے ساتھ نظر آ رہے ہیں۔

کیٹ بے بی نے اس پورے واقعے سے ناراض ہو کر میڈیا کے نام ایک کھلا خط لکھا ہے۔ انہوں نے لکھا ہے ’میں ایک فلم میگزین میں اپنی تصاویر شائع ہونے اور پھر اسے دوسرے میڈیا کی طرف سے لیے جانے سے بہت دکھی اور مایوس ہوں۔ یہ تصاویر میری اجازت کے بغیر اس وقت لی گئی جب میں چھٹیاں منا رہی تھی۔ اس تصویر کو اپنے تجارتی فائدے کے لیے استعمال کیا گیا۔‘

قطرینہ نے لکھا ’میں اسے ایک بزدلانہ عمل سمجھتی ہوں۔ صحافیوں کا ایک طقبہ ایسا بھی ہے جو فلمی شخصیات کی رازداری اور شائستگی کی تمام حدود پار کرتے ہوئے انہیں اکثر نشانہ بناتے رہے ہیں اور میری یہ تصاویر اسی طرح کی صحافت کو فروغ دیتی ہے۔‘

قطرینہ نے ذرائع ابلاغ سے اپیل کی ہے کہ وہ ان کی یہ مذکورہ تصویریں استعمال نہ کریں۔

'بے شرم' سنی ليوني

Image caption سنی لیونی فحش فلموں سے اداکاری کرتے ہوئے بالی وڈ تک پہنچی ہیں

رنبیر کپور کی آنے والی فلم ’بے شرم‘ کا پروموشن زور و شور سے شروع ہوگیا ہے اور یو ٹیوب پر اس کے پروموز بھی شروع ہوگئے ہیں لیکن انٹرنیٹ پر اس کا پورا فائدہ رنبیر کے بجائے سنی ليوني کو مل رہا ہے۔

اصل میں لوگ جب رنبیر کی فلم ’بے شرم‘ کے لیے نیٹ پر تلاش کرتے ہیں تو ساتھ میں انہیں سنی ليوني سے متعلق ایک ویب سائٹ ’بےشرم‘ نظر آتی ہے اور لوگ اس پر چلے جاتے ہیں۔

تاہم سنی کے مطابق یہ ان کی ویب سائٹ نہیں ہے۔ یہ امریکہ کی ایک سائٹ ہے جس کے لیے سنی لیونی نے برسوں پہلے شوٹ کیا تھا۔

راج کی ’شرط‘ پر ریلیز ہوگی ’چینائی ایکسپریس‘

Image caption شاہ رخ خان کی فلم ’چینائي ایکپریس‘ عید کے موقع پر ریلیز ہونے والی ہے

شاہ رخ خان کی فلم ’چینائی ایکسپریس‘ کی ریلیز کو روکنے کی دھمکی دینے والی مہاراشٹر نونرمان سینا کے صدر راج ٹھاکرے نے اس کی ریلیز کی مشروط حمایت کرنے کی بات کی ہے۔

’چینائی ایکسپریس‘ نو اگست کو ریلیز ہو رہی ہے اور اس کے لیے ممبئی کے تمام تھیٹر بک کیے جا چکے تھے۔ اس وجہ سے 19 جولائی کو ریلیز ہوئی مراٹھی فلم دنياداري کو بھی تھیٹروں سے اتارے جانے کی منصوبہ بندی تھی جس کی مخالفت مہاراشٹر نونرمان فوج کر رہی تھی۔

اس سلسلے میں ’چينائی ایکسپریس‘ کے ڈائریکٹر روہت شیٹی اور دنياداري کے ہدایتکار سنجے جادھو، راج ٹھاکرے سے ملنے پہنچے اور پھر طے کیا گیا کہ جن سنگل سکرین میں ’دنياداري‘ لگی ہے وہاں ’چینائی ایکسپریس‘ نہیں دکھائي جائےگي۔

اسی بارے میں