دہلی: ویزے کی معیاد ختم ہونے پر پولیس کا عدنان سمیع خان کو نوٹس

Image caption نوٹس میں پولیس نے ان سے یہ بھی جاننا چاہا ہے کہ کیا انہوں نے اپنے ویزے کی توسیع کے لیے درخواست دی ہے

پاکستان کے مقبول گلوکار اور موسیقار عدنان سمیع خان کو ویزا ختم ہونے کے بعد بھارت میں غیر قانونی طور پر رہنے پر ممبئی پولیس نے نوٹس جاری کر دیا ہے۔

واضح رہے کہ عدنان کے بھارت کے ویزے کی مدت اس مہینے کے اوائل میں ختم ہو چکی ہے۔

خبر رساں ایجنسیوں کے مطابق ممبئی پولیس نے عدنان سے ویزے کی مدت ختم ہوجانے کے بعد بھی بھارت میں قیام کا سبب پوچھا ہے۔

نوٹس میں پولیس نے ان سے یہ بھی جاننا چاہا ہے کہ کیا انہوں نے اپنے ویزے کی توسیع کے لیے درخواست دی ہے۔ عدنان کو نوٹس کا جواب دینے کے لیے ایک ہفتے کا وقت دیا گیا ہے۔

اطلاعات ہیں کہ عدنان نے ممبئی پولیس کو بتایا ہے کہ انہوں نے دہلی میں ویزے کی توسیع کے لیے درخواست دے رکھی ہے تاہم ابھی یہ واضح نہیں ہے کہ انہوں نے اس سلسلے میں کوئی دستاویزی ثبوت پولیس کو پیش کیا ہے یا نہیں۔

عدنان سمیع کئی برس سے بھارت میں رہ رہے ہیں۔ ان کے موجودہ ویزے کی مدت چھبیس ستمبر 2012 سے چھ اکتوبر 2013 تک تھی۔

عدنان کا ممبئی کے ایک فلیٹ کی ملکیت کے حوالے سے اپنی سابقہ بیوی صبا گالادری کے ساتھ مقدمہ بھی چل رہا ہے۔ ویزے کی مدت ختم ہونے کی بات عدالت میں اسی مقدمے کی سماعت کے دوران سامنے آئی۔

ممبئی پولیس کا کہنا ہے کہ اگر عدنان اس نوٹس کا جواب نہیں دیتے اور غیر ملکی شہریوں کے لیے نافذ ضابطوں پر عمل نہیں کرتے تو پھر ان کے خلاف متعلقہ ضابطوں کے تحت قانونی کارروائی کی جائے گی۔

دوسری جانب مہاراشٹر کی ہندو قوم پرست جماعت شیو سینا نے عدنان سمیع سے کہا ہے کہ وہ فوراً بھارت چھوڑ دیں۔

عدنان نےگزشتہ سنیچر کو شیو سینا کے ایک رہنما سے ملاقات کی تھی اور ان سے اپنے ویزے کے سلسلے میں تعاون کی درخواست کی تھی۔

یاد رہے کہ شیو سینا پاکستانی فنکاروں، گلوکاروں اور کھلاڑیوں کے بھارت میں آنےجانے کے خلاف ہے۔

اسی بارے میں