ہمیشہ تاخیر سے آنے والوں کی فہرست میں ایک نام اور

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption سشمیتا سین کو تاخیر کی وجہ سے میڈیا کے بائیکاٹ کا سامنا کرنا پڑا

بالی وڈ کے ستارے تاخیر کرنے کے لیے عام طور پر بدنام ہیں۔

سلمان خان، شاہ رخ خان اور گووندا جیسے ستاروں کے تاخیر سے آنے کی خبریں اکثر میڈیا کی شہ سرخیوں میں نظر آتی ہیں۔

اب اس فہرست میں ایک نیا نام جڑ گیا ہے اور وہ نام ہے سابق ملکۂ کائنات اور اداکارہ سشمیتا سین کا۔

انھیں حال ہی میں اپنی تاخیر کا خمیازہ بھگتنا پڑا۔

ممبئی میں ایک کتاب کی رسم اجرا کے موقع پر سشمیتا سین کو مدعو کیا گیا تھا۔

صحافیوں کو اس پروگرام کے لیے شام 5.30 بجے بلایا گیا تھا لیکن جب شام سات بجے تک انتظار کرنے کے بعد بھی جب سشمیتا سین نمودار نہیں ہوئیں تو صحافیوں کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو گیا اور سب نے مل کر اس تقریب کے بائیکاٹ کا فیصلہ کیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption شاہ رخ خان نے معافی مانگی تھی اور آئند تاخیر نہ کرنے کا وعدہ کیا تھا

جب سشمیتا تقریباً دو گھنٹے کی تاخیر کے بعد تقریب میں پہنچی تو تمام صحافی جا چکے تھے اور سشمیتا سے سوال جواب کے لیے وہاں کوئی نہیں تھا۔ سشمیتا نے بے دلی سے بک لانچ کی اور وہاں سے نکل آئیں۔

یہ پہلا موقع نہیں ہے جب کسی اداکار کی تاخیر کی وجہ سے میڈیا نے اس کا بائیکاٹ کیا ہو۔ اس کا شکار سپر سٹار شاہ رخ خان بھی ہو چکے ہیں۔ اپنی انتہائی حوصلہ مندانہ فلم ’را۔ ون‘ کی ایک تشہری تقریب میں جب وہ تقریباً تین گھنٹے تاخیر سے پہنچے تو میڈیا نے ان کا بائیکاٹ کیا تھا۔

تقریب کے دوران صحافیوں نے شاہ رخ خان سے ایک بھی سوال نہیں پوچھا۔ تب شاہ رخ خان نے میڈیا سے معافی مانگی تھی اور کہا تھا کہ آئندہ وہ پوری کوشش کریں گے کہ تاخیر سے نہ پہنچیں۔

Image caption عامر اور سلمان ایک دوسرے کے قریب دوست ہیں لیکن ان کے انداز جداگانہ ہیں

لیٹ ہونے کے معاملے میں سلمان خان بھی پیچھے نہیں ہیں۔ ایک دفعہ جب وہ اپنی ایک فلم کے پروموشن پر کافی دیر سے پہنچے تو صحافیوں نے ان کے اس رویہ کی ان سے شکایت کی۔

تب سلمان نے معافی مانگنے کے بجائے پلٹ کر کہہ دیا: ’میں لیٹ ہوا تو آپ سے انتظار کرنے کے لیے کس نے کہا تھا۔ آپ چلے جاتے۔ کسی نے آپ کے ساتھ زبردستی تو کی نہیں تھی۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption سیف کی یہ تصویر اسی موقعے کی ہے جب انھوں نے دہلی نہ آنے کی بات کی تھی

سیف علی خان تو اپنی فلم ’بلیٹ راجا‘ کے پروموشن کے دوران بے حد ناراض ہو گئے تھے۔ بحث و مباحثے کے بعد انھوں نے کہا تھا کہ وہ اب دہلی کبھی نہیں آئيں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ ٹریفک کی وجہ سے تاخیر ہوئي تھی اس لیے وہ ذمہ دار نہیں ہیں اور وہ معافی نہیں مانگیں گے۔

بالی وڈ کے تاخیر سے آنے والے لوگوں کی بات کی جائے تو گووندا کے ذکر کے بغیر یہ فہرست ادھوری رہے گی۔ گووندا نے تو میڈیا کے علاوہ اپنے فلم سازوں کو بھی بہت انتظار کرایا ہے۔

سنہ 1990 کی دہائی میں جب گووندا کا ستارہ بلندی پر تھا تب گووندا فلموں کے سیٹ پر اور انٹرویو کے لیے تاخیر کرنے میں چیمپیئن تھے۔

تصویر کے کاپی رائٹ pr
Image caption فلم ’ہم‘ اور ’بڑے میاں چھوٹے میاں‘ کی شوٹنگ کے دوران سیٹ پر کئی بار امیتابھ بچن جیسے اداکار کو بھی گووندا نے انتظار کروایا

کہا تو یہ بھی جاتا ہے کہ فلم ’ہم‘ اور ’بڑے میاں چھوٹے میاں‘ کی شوٹنگ کے دوران سیٹ پر کئی بار امیتابھ بچن جیسے اداکار کو بھی گووندا نے انتظار کروایا جس سے مبینہ طور پر امیتابھ ناراض بھی ہو گئے تھے۔

ایک دفعہ جب بی بی سی نے گووندا سے انٹرویو طے کیا تھا تو ان سے ملنے کا جو وقت دیا گیا اس وقت تک گووندا اپنے ہوٹل میں سو ہی رہے تھے۔

دو گھنٹے کے انتظار کے بعد گوندا کے دیدار ہوئے اور تب جا کر انٹرویو کیا جا سکا۔

اسی بارے میں