اچھا وقت آنے والا ہے: سری سانت

تصویر کے کاپی رائٹ Colors
Image caption سری سانت کو سکول کے زمانے ہی سے رقص کا شوق تھا

بھارت کے سابق ٹیسٹ کرکٹر شانتاكمارن سری سانت کرکٹ میں پابندی کے بعد اب ایک نئے روپ میں اپنے مداحوں کے سامنے آنے والے ہیں۔

ان کی رقص کرنے کی صلاحیت کی پہلی جھلک کرکٹ کے مداحوں نے دسمبر 2006 میں جوہانسبرگ کے میدان میں اس وقت دیکھی تھی جب جنوبی افریقی فاسٹ بولر آندرے نیل کی گیند پر چھکا مارنے کے بعد وہ پچ پر اپنا بیٹ ہلا ہلا کر ناچنے لگے تھے۔

اس واقعے کو آٹھ سال گزر چکے ہیں اور سری سانت پر سپاٹ فکسنگ کے الزام میں پابندیاں عائد ہیں اس لیے اب وہ رقص کی صلاحیت کے مظاہرے کے لیے تیار ہیں اور انھیں اس کے لیے پلیٹ فارم بھی مل گیا ہے۔

سری سانت ڈانس ریئلٹی شو ’جھلک دكھلا جا‘ میں بطور امیدوار شامل ہو رہے ہیں جس کا آغاز سات جون سے ہو رہا ہے۔

میدان میں اور میدان کے باہر اپنی حرکتوں کی وجہ سے کرکٹ کے ’بگڑے بچے‘ کی شبیہ رکھنے والے سری سانت نے بی بی سی سے بات کرتے ہوئے کہا: ’میں اس شو میں حصہ لے کر دنیا کو دکھانا چاہتا ہوں کہ انسان کو امید کا دامن ہاتھ سے جانے نہیں دینا چاہیے۔ میری فیملی نے مجھے سپورٹ کیا۔ میں اس شو میں اپنا سب کچھ لگا دوں گا۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ Colors
Image caption سری سانت سات جون سے شروع ہونے والے ریئلٹی شو جھلک دکھلا جا میں امیدوار کے طور پر شریک ہو رہے ہیں

انھوں نے کہا کہ اس مشکل دور میں ان کی اہلیہ نے بھرپور ساتھ دیا ہے۔ واضح رہے کہ گذشتہ سال انھوں نے اپنی گرل فرینڈ سے شادی کی تھی۔

بھارت کی جنوبی ریاست کیرالا سے تعلق رکھنے والے فاسٹ بولر سری سانت نے بتایا کہ انھیں سکول کے زمانے سے ہی ڈانس کا شوق تھا لیکن کرکٹ میں آنے کے بعد ڈانس ان سے چھوٹ گیا:

’سکول کے ہی زمانے میں چھوٹ جانے والے اس شوق کو اب میں اس شو کے ذریعے پورا کروں گا۔ کوشش کروں گا کہ ہر دور میں دس میں سے دس نمبر حاصل کر سکوں۔‘

سری سانت نے بتایا کہ شو کے پیش نظر وہ ممبئی ہی منتقل ہو گئے ہیں۔ انھوں نے کہا: ’امید کرتا ہوں کہ میرے برے دن گزر گئے اور اب اچھا وقت شروع ہونے والا ہے۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ Sateesh B.S.
Image caption سری سانت کی گذشتہ سال دسمبر میں ان کی گرل فرینڈ بھونیشوری کماری سے شادی ہوئی تھی

کرکٹ میں پابندی لگنے اور سپاٹ فکسنگ کے الزامات کے بارے میں انھوں نے بتایا: ’مجھے امید ہے کہ میں ان آزمائشوں سے نکل آؤں گا۔ کرکٹ اب بھی میری اولین ترجیح ہے اور میں واپس ضرور آؤں گا۔ چونکہ ابھی جانچ جاری ہے اور مقدمہ چل رہا ہے اس لیے اس سے زیادہ کہنا مناسب نہیں۔‘

رقص و موسیقی کے علاوہ سری سانت فلموں میں بھی قسمت آزمانے کے لیے تیار ہیں۔ وہ تمل اور تیلگو میں بننے والی ایک فلم میں موسیقی بھی دے رہے ہیں۔

اسی بارے میں