’ہمیں انڈر ورلڈ سے دھمکیاں ملی ہیں‘

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption یہ واقعہ 23 مئی کو انڈین پریمیئر لیگ کے ایک میچ کے دوران پیش آیا تھا

بالی وڈ کی اداکارہ پریتی زنٹا کے ساتھ مبینہ چھیڑ چھاڑ کے معاملے میں ایک نیا موڑ اس وقت سامنے آیا جب صنعت کار نیس واڈیا کے والد نسلی واڈیا نے کہا کہ انھیں انڈر ورلڈ سے دھمکیاں ملی ہیں۔

نسلی واڈیا نے بدھ کو ممبئی کے این ایم جوشی پولیس سٹیشن میں شکایت درج کی ہے کہ انھیں انڈر ورلڈ نے فون پر دھمکی دی ہے۔

اس معاملے پر بات کرتے ہوئے ممبئی پولیس کے ایک افسر نے بتایا: ’یہ معاملہ کرائم برانچ کے اینٹی ایكسٹورشن سیل کے پاس ہے اور وہ اس معاملے کی تحقیقات کر رہے ہیں۔‘

واڈیا سے منسلک ذرائع نے بتایا: ’نیس واڈیا کے والد کی سیکریٹری کو پانچ بار فون آئے اور ایک پیغام ملا جس میں پریتی زنٹا کو پریشان نہ کرنے کے لیے کہا گیا۔ فون کرنے والوں نے کہا کہ ان کا تعلق انڈر ورلڈ سے ہے اور اپنا نام سورج پجاری بتایا۔‘

اطلاعات کے مطابق نسلی واڈیا کو دھمکی دی گئی ہے کہ وہ نیس واڈیا کو پریتی زنٹا سے دور رہنے کو کہیں ورنہ ان کا کاروبار متاثر ہوسکتا ہے۔

اس سے پہلے اداکارہ پریتی زنٹا نے نسلی واڈیا کے بڑے بیٹے اور اپنے سابق بوائے فرینڈ نیس واڈیا کے خلاف چھیڑ خانی کرنےکا مقدمہ درج کروایا تھا۔ یہ مقدمہ ہندوستان کی دفعہ 354 کے تحت درج کیا گیا۔

قانونی امور کے ماہر انوپ بھٹناگر کے مطابق کسی خاتون کو بےوقار کرنے کی کوشش میں آئی پی سی کی دفعہ 354 لگائی جاتی ہے۔

پریتی زنٹا کے الزامات پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے نیس واڈیا نے کہا تھا: ’میں اس شکایت پر حیران ہوں اور مجھ پر لگائے گئے الزامات مکمل طور پر بے بنیاد اور غلط ہیں۔‘

پریتی زنٹا کے وکیل نے اس بات کی وضاحت کی تھی کہ شکایت جنسی طرز کی چھیڑ چھاڑ کرنے کے متعلق نہیں بلکہ ہاتھا پائی کرنے کے بارے میں ہے۔

بھارتی ذرائع ابلاغ میں اس بات پر بھی بحث و مباحثہ چل رہا ہے کہ آیا کہیں پریتی زنٹا نے جلد بازی میں تو کوئی قدم نہیں اٹھا لیا۔

بہت سے لوگ اس مقدمے کو درست نہیں مانتے ہیں جبکہ بعض افراد نے پریتی زنٹا کے فیصلے کو درست اور حوصلہ افزا قدم قرار دیا ہے۔

یہ واقعہ 23 مئی کو انڈین پریمیئر لیگ کے ایک میچ کے دوران پیش آیا تھا۔

پریتی اور صنعت کار نیس واڈیا آئی پی ایل کی ٹیم کنگز الیون پنجاب کے مشترکہ مالک ہیں اور دونوں کے درمیان سنہ 2009 سے تعلق تھا۔

اسی بارے میں