پاپ کلچر پھر واپس آئے گا: گلوکار موہت چوہان

تصویر کے کاپی رائٹ mohit chauhan
Image caption موہت چوہان سلک روٹ بیند کا چہرہ ہوا کرتے تھے

فلم ’چک دے انڈیا‘ اور ’دھوم ٹو‘ کے گیت سے شہرت حاصل کرنے والے بالی وڈ کے گلوکار موہت چوہان کچھ عرصے سے موسیقی کی دنیا سے غائب ہیں۔

حال ہی میں وہ بھارتی وزیر اعظم کی ’صاف ستھرے بھارت‘ کی مہم کے تعلق سے ہونے والے ایک پروگرام پر نظر آئے۔

وہ آج کل کسی فلم کے لیے گیت نہیں گا رہے ہیں۔ کیا انھیں گانے کا موقع نہیں مل رہا؟

اس سوال کے جواب میں انھوں نے کہا: ’میں بہت آرام سے ہوں اور اپنی پسند کی موسیقی تیار کر رہا ہوں۔ ایسا نہیں ہے کہ میں چھٹی پر ہوں یا میرے پاس کام کی کمی ہے۔‘

موہت چوہان نے اپنے کریئر کی شروعات پاپ البم کے ذریعے کی تھی۔ موہت چوہان، میکہ سنگھ، دلیر مہندی، سكھ وندر سنگھ جیسے دور حاضر کے بڑے گلوکاروں نے پہلے پاپ البم سے شہرت حاصل کی پھر فلموں میں آئے۔

لیکن کہا جاتا ہے کہ بھارت میں اب یہ کلچر ختم ہو رہا ہے۔

اس بات پر موہت نے کہا: ’ہاں یہ ضرور ہے کہ پاپ البم کم بن رہے ہیں۔ اب گلوکاروں کو بالی وڈ میں ہی مختلف قسم کے کام مل جاتے ہیں کہ وہ اپنا بینڈ یا البم بنانے کی بات ہی نہیں سوچتے۔‘

تاہم انھوں نے کہا کہ یہ چلن ایک بار پھر سے لوٹے گا۔‘

مختصر فلم ’نمبر ون یاری‘ کے لیے ان کا ایک نغمہ ’ایسی ویسی دوستی نہیں‘ آنے والا ہے۔

ان کے مطابق یہ نغمہ در اصل ’سلک روٹ بینڈ‘ کے دوستوں کو خراج عقیدت ہے۔ واضح رہے کہ وہ سلک روٹ بیند کا چہرہ ہوا کرتے تھے۔

اسی بارے میں