نصیرالدین شاہ اب آئن سٹائن کے روپ میں

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption نصیرالدین شاہ نے اس سے قبل اردو کے عظیم شاعر غالب کا کردار ادا کر کے اسے مقبول خاص عام کیا تھا

کیا دنیا کے معروف سائنس دان البرٹ آئن سٹائن کو بھی اپنے کام سے مایوسی ہو سکتی تھی؟ کیا ناکامیوں کا خوف انھیں بھی گھیرے رکھتا تھا؟

ایسے کئی سوالات کے جواب دینے کے لیے آئن سٹائن خود ہی جلوہ گر ہوں گے لیکن بہ انداز ديگر۔ بالی وڈ کے معروف اداکار نصیر الدین شاہ اس سال اسی نام کے ڈرامے میں اس معروف سائنس دان کا کردار ادا کرتے نظر آئیں گے۔

یاد رہے کہ نصیرالدین شاہ نے اس سے قبل اردو کے عظیم شاعر غالب کا کردار ادا کر کے اسے مقبول خاص عام کیا تھا۔

اس سال ممبئي میں پرتھوی تھیئٹر فیسٹیول 2014 کا آغاز آئن سٹائن کے پریمیئر کے ساتھ ہو رہا ہے۔

کینیڈین ڈرامہ نگار گیبریل ایمینوئل کے اس ڈرامے کے لیے ہدایات بھی نصیرالدین شاہ نے دی ہیں۔

بدھ سے شروع ہونے والے پرتھوی تھیئٹر فیسٹیول میں اس سال 25 پرفارمنسز ہوں گی۔ 12 دنوں تک چلنے والے اس فیسٹیول میں 13 نئی پروڈکشنز کو 13 گروپ پیش کریں گے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Prithvi Theatre
Image caption اس ڈرامے کے ہدایت کار بھی نصیرالدین شاہ ہی ہیں

اس کے علاوہ مختلف تھیئٹروں کے معروف چہروں کے ساتھ بات چیت کے مواقع بھی فراہم کیے جا رہے ہیں۔

پرتھوی تھيئٹر اپنے زمانے کے معروف اداکار پرتھوی راج کپور کے نام پر قائم کیا گیا ہے۔ پرتھوی راج کپور نے فلم مغل اعظم میں اکبر کا یادگار کردار نبھایا تھا۔

ممبئی کے جوہو علاقے میں قائم پرتھوی تھیئٹر کے ٹرسٹی كنال نے بی بی سی ہندی کو بتایا: ’کچھ نئے عناصر اس سال فیسٹیول کا حصہ ہیں۔ جیسے اس بار فرِنج تھیئٹر کے ذریعہ ہم ایک نیا پلیٹ فارم تیار کر رہے ہیں۔ اس تجرباتی تھیئٹر کے ذریعہ فنکار اپنی پرفارمنسز کے علاوہ ناظرین سے براہ راست بات بھی کریں گے۔‘

فرنج تھیئٹر یعنی حاشیہ پر کام کرنے والے تھیئٹر میں داخلہ مفت ہے۔ یہاں آپ ’فالز 2-11،‘ (کلرک اینڈ جوئے)، ’کریپس لاسٹ ٹیپ‘ (سیموئل بیكٹ) اور ’سانگز آف دی سوانز‘ (آزاد حسین) جیسے ڈرامے بھی دیکھ سکتے ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption اس فیسٹیول میں سرکس کو بھی شامل کیا گیا ہے

انھوں نے بتایا کہ پہلی بار مختلف طریقے کے سرکس بھی فیسٹیول کا حصہ بنے ہیں، فرانسیسی نیو سرکس اپنا کرتب دکھائے گا اور اس کے ساتھ بھارتی ریمبو سرکس بھی تفریح فراہم کرنے کے لیے موجود ہوگا۔

کئی سال سے اس فیسٹیول سے منسلک اداکار، مصنف، ہدایت کار مكرند دیش پانڈے نے اپنا تجربہ بتاتے ہوئے کہا: ’فیسٹیول تو کئی ہوتے ہیں لیکن پرتھوی تھیئٹر فیسٹیول کی بات ہی کچھ اور ہے، یہاں تو جیسے تہوار کا سا ماحول ہوتا ہے۔‘

اسی بارے میں