سلمان، رتیک اور قطرینہ ہالی وڈ سے ٹکر لینے کو تیار

Image caption سلمان خان اور رتیک روشن کی فلمیں ’کک‘ اور ’بینگ بینگ‘ کو گذشتہ سال باکس آفس پر زبردست کامیابی ملی تھی

بالی وڈ کے اداکار سلمان خان، رتیک روشن اور اداکارہ قطرینہ کیف کی فلمیں سٹنٹ کے میدان میں ہالی وڈ کی فلموں سے ٹکر لینے کو تیار ہیں۔

بالی وڈ کی انتہائی کامیاب فلمیں ’کک اور ’بینگ بینگ‘ ہالی وڈ کی فلم ’دا امیزنگ سپائیڈر مین 2 اور ’ٹرانسفارمرز: ایج آف ایکسٹنکشن‘ کے مد مقابل ہیں۔

در اصل ان کا مقابلہ ٹارس ورلڈ سٹنٹ ایوارڈز کے لیے مختلف زمروں میں ہے۔

سلمان خان کی فلم ’کک‘ کا مقابلہ بیسٹ ہائی ورک ایوارڈ کے لیے ’دا ایکسپینڈیبلز 3‘ ، ’ٹرانسفارمرز: ایج آف ایکسٹنکشن‘ اور ’22 جمپ سٹریٹ‘ کے ساتھ ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Fox Star
Image caption فلم ’بینگ بینگ‘ کو چار زمروں میں نامزد کیا گیا ہے

اسے بہترین سٹنٹ ریگینگ کے ایوارڈ کے لیے بھی نامزد کیا گیا ہے جہاں اس کا مقابلہ ’ٹرانسفارمرز‘:’ ایج آف ایکسٹنکشن‘، ’22 جمپ سٹریٹ، ’کیپٹین امریکہ: دا ونٹر سولجر اور ’ایکس من: ڈیز آف فیوچر پاسٹ‘ کے ساتھ ہے۔

دوسری جانب رتیک روشن کی فلم کو بہترین فائٹ ایوارڈ کے ساتھ کسی گاڑی کے ساتھ بہترین کارکردگی کے لیے بھی نامزد کیا گیا ہے۔

بیسٹ فائٹ میں ان کی فلم ’بینگ بینگ‘ کا مقابلہ ’300 رائز آف این امپائر،‘ ’کیپٹن امریکہ: دا ونٹر سولجر اور ’جان وک‘ کے ساتھ ہے۔

جبکہ گاڑی کے ساتھ بہترین سٹنٹ کے زمرے میں ان کے مقابل ’دا امیزنگ سپائڈر مین 2 ‘، ’کیپٹن امریکہ: دا ونٹر سولجر‘، ’نیڈ فار سپیڈ‘ اور ’نائٹ کرالر‘ کے ساتھ ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Sajid Nadiadwala
Image caption فلم ’کک‘ گذشت سال کی کامیاب ترین فلم رہی تھی

اس فلم کو بیسٹ سپیشلیٹی سٹنٹ ایوارڈ کے لیے نامزد کیا گیا ہے جبکہ یہ امید ظاہر کی جا رہی ہے کہ کسی خاتون کے ذریعے مجموعی طور پر بہترین سٹنٹ کا ایوارڈ قطرینہ کیف کو جا سکتا ہے۔

اس زمرے میں ’نیڈ فار سپیڈ،‘ ’پامپیلی،‘ ’دا سیکرامنٹ،‘ ’ایکس من: ڈیز آف فیوچر پاسٹ‘ بھی نامزد کی گئی ہیں۔

ٹارس ورلڈ سٹنٹ ایوارڈز کی تقریب کیلیفورنیا میں نو مئی کو منعقد ہو گی جہاں فاتح کا اعلان کیا جائے گا۔

اسی بارے میں