لندن میں نوٹنگ ہِل کارنیوال کی اختتامی پریڈ

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption اس دو روزہ اس کارنیوال میں دس لاکھ سے زیادہ افراد شریک ہوئے ہیں

برطانیہ کے دارالحکومت لندن میں پیر کو مشہور نوٹنگ ہِل کارنیوال کی اختتامی پریڈ کی جا رہی ہے جس میں رنگ برنگے کپڑوں میں ملبوس60 کے قریب بینڈ حصہ لے رہے ہیں۔

نوٹنگ ہِل کارنیول کے رنگ (تصاویر)

اس موقع پر کارنیوال میں شریک افراد نے بارش سے بچنے کا لباس پہن کر اور چھتریاں تان کر لندن کی سڑکوں پر سالانہ مارچ کیا۔ کارنیوال میں 38 کے قریب صوتی نظام استعمال کیے گئے تا کہ ہجوم کو تفریح فراہم کی جا سکے۔

خیال ہے کہ دو روزہ اس کارنیوال میں دس لاکھ سے زیادہ افراد شریک ہوئے ہیں۔

اس سے قبل ایک شخص کو چاقو مار کر زخمی کیا گیا جس کے نتیجے میں پولیس نے تین افراد کو گرفتار کر لیا ہے۔

اتوار کو پولیس نے کارنیوال میں کل 126 گرفتاریاں کی تھیں جن کا تعلق امنِ عامہ سے تھا۔ دو روزہ تقریبات کے دوران اس علاقے میں سڑکیں بند تھیں۔

کارنیوال میں جانے والی ربیکا پرکنز کا کہنا ہے ’سُر اور تال سے ڈوبی ہوئی تھاپ پر جسم کو ہلانا اور ایسے لوگوں میں گھِرا ہونا جو یہی کچھ کر رہے ہوں اور پھر اس پر ہنسنا اور اجنیبوں سے باتیں کرنا۔۔۔اس میں کچھ خاص بات ہے۔ مجھے یہ بہت اچھا لگتا ہے۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption اتوار کو پولیس نے کارنیوال میں کل 126 گرفتاریاں کی تھیں جن کا تعلق امنِ عامہ سے تھا

اس سال کارنیوال پر تنقید بھی ہوئی ہے کیونکہ منتظمین نے صحافیوں اور فوٹوگرافروں سے مطالبہ کیا تھا کہ وہ ایک سو پاونڈ دے کر شرکت کی رسمی منظوری حاصل کریں اور کارنیوال کی ویب سائٹ پر اپنا کام شیئر بھی کریں۔

اس بات پر بھی کچھ اختلاف تھا کہ کارنیوال سرکاری طور پر کس برس شروع ہوا۔ نوٹنگ ہلِ کارنیوال انٹرپرائز ٹرسٹ کے مطابق کچھ لوگوں کا خیال ہے کہ پہلی بار کارنیوال سنہ 1964 میں منعقد ہوا جبکہ دیگر اصرار کرتے ہیں کہ کارنیوال کا آغاز سنہ 1966 میں ہوا تھا۔

اسی بارے میں