سلمان کے لٹنے کی خبر اور شاہ رخ کا نیا انداز

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption اطلاعات کے مطابق سلمان خان نے اپنی سکیورٹی میں اضافے کی بات کہی ہے

اس ہفتے میڈیا میں سلمان خان کے لٹنے کی خبریں گشت کرتی رہیں۔ خبروں کے مطابق ممبئی کے ایک نائٹ کلب میں چار حسینائیں سلمان کی فین بن کر آئیں اور باتوں ہی باتوں میں ان کا والیٹ، سن گلاسز (دھوپ کے چشمے) اور پینڈنٹ لے اڑیں۔

اب کوئی ’چلبل پانڈے‘ سے پوچھے کہ بھائی جان اتنا کچھ ہو گیا اور آپ کو پتہ بھی نہیں چلا، یہ کیسے ہوا؟

بالی وڈ راؤنڈ اپ سننے کے لیے کلک کریں

ان کی بہن ارپتا کا کہنا ہے کہ سلمان کسی نائٹ کلب نہیں گئے تھے لیکن پروڈیوسر نندتا سنگا نے بعض اخبارات سے اس واقعے کی تصدیق کی ہے۔

اطلاعات کے مطابق انھوں نے کوئی شکایت درج کرنے کے بجائے اپنی سکیورٹی میں اضافے کی بات کہی ہے۔

پروموشن کا نیا انداز

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption شاہ رخ اپنی کسی فلم سے کوئی تصویر پوسٹ کرکے دل والے کا پروموشن کر رہے ہیں

آج کل فلم آنے سے پہلے اس کے پروموشن پر پروڈیوسرز کروڑوں روپے خرچ کرتے ہیں۔ فلم کے ہیرو ہیروئن ایونٹس پر جاتے ہیں، بیرن ممالک کے دورے ہوتے ہیں۔

لیکن شاہ رخ خان نے پروموشن کا ایک سستا اورآسان طریقہ ڈھونڈ نکالا ہے وہ یہ کہ شاہ رخ ہر روز اپنی آنے والی فلم ’دل والے‘ سے متعلق کوئی تصویر ٹوئٹ کر دیتے ہیں تو کبھی شوٹنگ سے متعلق کوئی واقعہ۔

حال ہی کی بات ہے پاکستانی اداکارہ مائرہ خان جو کہ فلم رئیس میں شاہ رخ کے ساتھ بطور ہیروئن کام کر رہی ہیں جب انھوں نے ٹوئٹر پر کاجول کے ساتھ ان کی ایک تصویر دیکھی تو ٹویٹ کا جواب لکھا: ’واؤ آپ دونوں کی جوڑی کتنی اچھی لگ رہی ہے۔‘

ایسے میں شاہ رخ کہاں چپ رہنے والے تھے جھٹ سے واپس ٹویٹ کیا کہ فلم ’رئیس‘ میں ’ہماری جوڑی بھی بہت اچھی لگے گی۔‘ لگتا ہے کہ فلم کی پروموشن کا شاہ رخ کا یہ نیا سٹائل بہت مشہور ہونے والا ہے۔

قطرینہ بڑی فلمیں کیوں چھوڑ رہی ہیں؟

Image caption شاید قطرینہ کو کپور خاندان کی بہو بننے کا گرین سگنل مل گیا ہے

ایسا لگتا ہے کہ اداکارہ اسین کی طرح اب قطرینہ کیف بھی گھر بسانے کی تیاری میں ہیں کیونکہ جس طرح وہ بڑے بڑے بینرز کی فلمیں کرنے سے انکار کر رہی ہیں اس سے ایسا لگتا ہے کہ کپور خاندان نے انھیں بہو بنانے کا گرین سگنل دے دیا ہے۔

حال ہی میں قطرینہ کیف کئی فلموں کا حصہ بنتے بنتے رہ گئیں اب انھوں نے فلمیں خود چھوڑیں یا پھر مل نہیں پائیں یہ کہنا مشکل ہے۔

البتہ کہا یہ جا رہا ہے کہ روہت شیٹی کی فلم ’دل والے‘ اور سنجے لیلا بھنسالی کی فلم ’باجی راؤ مستانی‘پہلے انھیں آفر ہوئی تھیں ان کی ایک قریبی دوست کا کہنا ہے کہ ان فلموں کو چھوڑنے کی وجہ ذاتی ہے، اب وہ اپنے کام کا بوجھ کم کر رہی ہیں تاکہ لائف میں سیٹل ہو سکیں۔

اس سے پہلے بھی رنبیر اور قطرینہ کے بارے میں اسی طرح کی خبریں گردش کرتی رہی ہیں۔ دیکھتے ہیں کہ اس بار بھی کیا صرف خبر ہی ہے یا پھر واقعی خوشخبری۔

حسن کے ساتھ نزاکت آئی جاتی ہے

تصویر کے کاپی رائٹ Hardly Anonymous Pr
Image caption نوازالدین میور سوٹنگز کے برانڈ امبیسیڈر قرار پائے ہیں

کیا آپ سوچ سکتے ہیں کہ ایک دن نواز الدین صدیقی شاہ رخ خان اور سلمان خان کی جگہ لے لیں گے، نہیں ناں!

لیکن سچ یہی ہے کیونکہ نواز الدین صدیقی ’میور‘ سوٹنگز کے برانڈ امبیسیڈر بن چکے ہیں۔

’میور‘کی ماڈلِنگ اس سے قبل سلمان خان ، شاہ رخ خان اور سہواگ جیسے سٹارز کر چکے ہیں۔

ویسے یقین تو نواز بھائی کو بھی نہیں آ رہا ہے۔ کہاوت تو یہ ہے کہ ’خدا جب حسن دیتا ہے نزاکت آ ہی جاتی ہے‘ لیکن بالی وڈ میں جب خدا کامیابی دیتا ہے تو بڑی فلمیں اور بڑے برانڈز خود ہی آپ کی جانب دوڑے چلے آتے ہیں۔

اسی بارے میں