پلاسٹک سرجری کا الزام لگانے پر ہتکِ عزت کا دعویٰ

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption شوہر اور اداکار ہوان ژیاؤمنگ نے بھی اینجلا بے بی کا دفاع کرتے ہوئے کہا ہے کہ ’کبھی کبھی وہ خاصی بدصورت لگتی ہیں‘

چین میں جاری ایک نمایاں مقدمے کے دوران معروف چینی اداکارہ نے اپنے چہرے کا معائنہ کروایا ہے۔

مقامی میڈیا کے مطابق اداکارہ اینجلا بے بی پر ایک کلینک نے چہرے کی پلاسٹک سرجری کروانے کا الزام لگایا جس کے بعد انھوں نے اس کلینک پر ہتک عزت کا دعویٰ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

ان کے چہرے کا معائنہ کرنے والے ڈاکٹروں کا کہنا تھا کہ ان کے چہرے کے خدوخال حقیقی ہیں۔

یہ خبریں ان کی شادی کے ایک ہفتے بعد سامنے آئی ہیں۔ ان کے شوہر اور اداکار ہوان ژیاؤمنگ نے بھی اینجلا بے بی کا دفاع کرتے ہوئے کہا ہے کہ ’کبھی کبھی وہ خاصی بدصورت لگتی ہیں‘۔

چین کے دارالحکومت بیجنگ کے ایک جج کا کہنا تھا کہ ان کے چہرے کے حوالے سے صداقت کی تصدیق کرنے کے لیے طبّی ماہرین کے ذریعے اس کا معائنہ کروایا جائے۔

26 سالہ اداکارہ جن کا اصل نام یون ونگ ہے، بیجنگ میں واقع ایک پلاسٹک سرجری کے ہسپتال پہنچی تھیں۔

ہسپتال میں ان کے چہرے کے کئی ایکس رے کیے گئے تھے جبکہ ایک موقع پر ڈاکٹروں کی جانب سے ان کے چہرے کو دبا کر بھی دیکھا گیا تھا۔

اس دوران ان کے ہمراہ حکومتی تصدیق کنندہ اور صحافیوں کی بڑی تعداد بھی تھی۔

ہسپتال کے چیف نے اداکارہ کے چہرے کے خدوخال کو اصلی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ ’بے بی کے سر اور چہرے کی ہڈیوں پر کسی قسم کی سرجری کے آثار نہیں پائے گئے۔‘

یہ خبر چینی سماجی رابطے کی ویب سائٹ سائنا ویبو پر مسلسل گردش میں رہی جبکہ ان کے مداحوں کی جانب سے ان کی حمایت کا اظہار بھی کیا گیا۔

گذشتہ چند سالوں میں انٹرنیٹ پر گردش کرنے والی چند تصاویر کے باعث ہانگ کانگ میں ماڈلنگ کے ذریعے شہرت کی دنیا میں قدم رکھنے والی اداکارہ کے پلاسٹک سرجری کروانے کی افواہیں گرم تھیں۔

اداکارہ کی جانب سے بیجنگ کے رولی بیوٹی کلینک پر 79 ہزار امریکی ڈالر ہرجانے کا دعویٰ کیا جا رہا ہے۔

سنہ 2012 میں اس کلینک پر اپنی ویب سائٹ پر آرٹیکل شائع کرنے کا الزام ہے جس میں کہا گیا تھا کہ اداکارہ نے پلاسٹک سرجری کروائی ہوئی ہے۔

اداکارہ اصرار کرتی رہی ہیں کہ ان کی منفرد شکل و صورت کی وجہ ان کا خاندانی پس منظر ہے اور ان کے دادا کا تعلق جرمنی سے تھا۔