ِخاکروب نے آرٹ کا نمونہ کوڑے میں پھینک دیا

اٹلی میں ایک خاکروب کی جانب سے آرٹ کے ایک نمونے کو غلطی سے کوڑے کی ٹوکری میں پھینک دیے جانے کے بعد اسے دوبارہ محفوظ کر لیا گیا ہے۔

آرٹ کے نمونے جسے ’ہم آج رات ڈانس کرنے کہاں جائیں‘ کا نام دیا گیا تھا، کو ایک خاکروب نے غلطی سے گذشتہ رات کے کوڑے کا ڈھیر سمجھ کر کوڑے کی ٹوکری میں پھینک دیا تھا۔

کوڑے کے اس ڈھیر میں سگریٹ کے ٹکڑے، شیمپین کی خالی بوتلیں اور رنگین کاغذ کے پرزے شامل تھے۔

اٹلی کے بوزن بولزانو میوزیم نے مصور کی منظوری کے بعد آرٹ کے نمونے کو بحال کر دیا ہے۔

واضح رہے کہ اٹلی کے شہر میلان سے تعلق رکھنے والے دو مصوروں نے سنہ 1980 کی دہائی میں لذت پرستی اور سیاسی بدعنوانی کی نمائندگی کرنے کے لیے بوزن بولزانو میوزیم کی بنیاد رکھی تھی۔

بوزن بولزانو کی انتظامیہ نے میوزیم آنے والے افراد سے اس واقعے کے بعد معذرت کی ہے۔

اس نمائش کو منگل کو دوبارہ کھول دیا جائے گا۔

اسی بارے میں