جے کے راؤلنگ نے ناول مسترد کرنے کے خط شائع کر دیے

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption دا ککوز کالنگ‘سنہ 2013 میں شائع ہو گیا تھا

شہرہ آفاق کتاب ’ہیری پوٹر‘ کی مصنفہ جے کے راؤلنگ نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر دو ایسے لیٹرز اپ لوڈ کیے ہیں جو انھیں ناشروں نے اس وقت بھیجے تھے جب انھوں نے اپنا پہلا ناول شائع کرنے کی کوشش کی تھی۔

مصنفہ کو یہ مسترد کرنے کے خطوط ان کے ناول ’دا ککوز کالنگ‘ کے حوالے سے موصول ہوئے تھے جو بالآخر سنہ 2013 میں شائع ہو گیا تھا۔

ٹوئٹر پر یہ خطوط پوسٹ کرتے ہوئے راؤلنگ نے یہ بھی لکھا کہ انھوں نے یہ قدم اچھے منصنفوں کی حوصلہ افزائی کے لیے اٹھایا ہے۔

دا ککوز کالنگ، جس نے چھپنے کے بعد خاصی کامیابی حاصل کی تھی، اس کے بارے میں اپنے خط میں کانسٹیبل اینڈ روبنسن نامی پبلشنگ ہاؤس نے لکھا تھا کہ ’یہ شائع نہیں ہو سکتا۔‘

دوسرا خط کریمی دی لا کرائم پبلشر کی جانب سے تھا۔ انھوں نے فقط یہ لکھا تھا کہ اب ان کا الحاق سیورن ہاؤس پبلشر کے ساتھ ہو گیا ہے اور وہ فی الوقت نئی درخواستیں وصول نہیں کر سکتے۔‘

ٹوئٹر پر رولنگ کے 70 لاکھ سے زائد فالورز ہیں اور یہ خطوط انھوں نے اپنے ایک مداح کی جانب سے کی جانے والی درخواست پر پوسٹ کیے ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ PA
Image caption ہیری پوٹر سیریز کی اب تک 40 کروڑ سے زائد کاپیاں فراخت ہو چکی ہیں

انھوں نے اپنا ناول مسترد کرنے والوں کے دستخط مٹا دیے ہیں۔ وہ کہتی ہیں کہ انھوں نے یہ خطوط کسی بدلے یا انتقام کے لیے نہیں بلکہ تخلیقی کام کی تحریک پیدا کرنے کے لیے لکھے ہیں۔

وہ کہتی ہیں کہ انھوں نے یہ سوچا تھا کہ وہ تب تک ہمت نہیں ہاریں گی جب تک آخری ناشر بھی انھیں مسترد نہیں کر دیتا۔ لیکن انھوں نے یہ بھی لکھا کہ اکثر مجھے خوف محسوس ہوتا تھا کہ ایسا ہو جائے گا۔

روزنامہ سنڈے ٹائمز کی جانب سے راؤلنگ کی شناخت ظاہر ہونے سے قبل تک ان کے ناول کی 1500 کاپیاں فروخت ہو چکی تھیں۔

ان کی لکھی گئی ہیری پوٹر سیریز کی اب تک 40 کروڑ سے زائد کاپیاں فروخت ہو چکی ہیں۔ اور انھیں سیریز پر مبنی آٹھ فلمیں کامیاب ترین فلموں کی فہرست میں شامل ہیں۔

راؤلنگ دنیا کی پہلی ارب پتی خاتون ناول نگار ہیں۔

اسی بارے میں