میں قطرینہ اور دیپکا نہیں بن سکتی: نرگس فخری

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption نرگس فاخری عمران ہاشمی کے ساتھ فلم اظہر میں ایک ساتھ کام کر رہے ہیں

امریکی نژاد ماڈل اور اداکارہ نرگس فخري کا کہنا ہے کہ فلم انڈسٹری میں انھیں ادکارہ قطرینہ کیف جیسی کامیابی تو نہیں ملی لیکن وہ اچھا کام کرنا چاہتی ہیں۔

نرگس نے سنہ 2011 میں امتیاز علی کی فلم ’راک سٹار‘ سے اپنے فلمی سفر کا آغاز کیا تھا۔

بھارتی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان محمد اظہر الدین کی زندگی پر مبنی فلم ’اظہر‘ میں نرگس فخري نوے کے عشرے کی اداکارہ سنگیتا بجلاني کے کردار میں دكھائی دیں گي۔ سنگیتا بجلانی نے کرکٹر محمد اظہر الدین سے شادی کی تھی۔

تصویر کے کاپی رائٹ NARGIS FAKHRI

اسی سلسلے میں بی بی سی سے بات کرتے ہوئے نرگس فخري نے یہ واضح کیا کہ ان پر سنگیتا بجلاني کے کردار کے حوالے سے کسی قسم کا دباؤ نہیں ہے کیونکہ انھوں نے اپنی قابلیت کے مطابق بہترین کام کیا ہے۔

لیکن ان کا کہنا تھا کہ فلم کا آئیکونک نغمہ ’اوئے اوئے‘ کا ریمکس کرنا ان کے لیے تھوڑا مشکل تھا۔

نرگس اپنے بالی ووڈ کے سفر کو آسان نہیں مانتی ہیں۔ وہ کہتی ہیں: ’راک سٹار کے بعد میری اداکاری کے حوالے سے جو برے تجزیے ہوئے اس سے مجھے صدمے پہنچا۔ جن لوگوں کے ساتھ میں نے کام کیا مجھے لگا کہ وہ میرا ساتھ دیں گے لیکن انھوں نے بھی مجھے تنہا چھوڑ دیا۔‘

نرگس کہتی ہیں: ’ایسا وقت بھی آیا تھا جب میں نے سوچا سب کچھ چھوڑ کر چلی جاؤں لیکن مجھے لوگوں کو بتانا تھا کہ میں کمزور نہیں ہوں۔ مجھے پتہ ہے کہ میں قطرینہ کیف یا دیپکا جیسی نہیں بن سکتی۔‘

انھوں نے کہا کہ ’ آج میرے پاس کام ہے اور اس مقام پر پہنچنے کے لیے میں نے اپنی اخلاقی اقدار کی قربانی نہیں دی۔ مجھے اپنے آپ پر فخر ہے۔‘

نرگس فخري فلم انڈسٹری میں کسی کو اپنا دوست نہیں مانتي ہیں۔

2016 میں نرگس کی چار فلمیں آئیں گی جس میں ’اظہر‘، ’ہا‎ؤس فل3‘، ’بینجو‘ اور ’ڈھشوم‘ شامل ہیں۔

اسی بارے میں