رمضان میں موسیقی سننے والوں پر تشدد

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption 20 مشتبہ اسلام پسندوں نے اسلام کے مقدس مہینے رمضان کے دوران شراب پینے اور میوزک سننے والے افراد پر تشدد کیا: مقامی میڈیا

برطانوی راک بینڈ ریڈیوہیڈ نے ترکی کے شہر استنبول میں پیش آنے والے اس واقعے کی مذمت کی ہے جس میں ان کی نئی میوزک البم کو سننے والے افراد کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا ہے۔

بتایا گیا ہے کہ 20 افراد نے اسلام کے مقدس مہینے رمضان کے دوران شراب پینے اور میوزک سننے والے صارفین اور عملے کے اراکین پر تشدد کیا۔

مقامی میڈیا کی جانب سے نشر ہونے والی غیر مصدقہ اطلاعات کے مطابق جمعے کو رات گئے پیش آنے والے اس واقعے میں ایک شخص زخمی ہوا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption حملے کے خلاف احتجاج کرنے والے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے پولیس نے پانی کی تیز دھار اور آنسو گیس کا استعمال کیا

سنیچر کو اس حملے کے خلاف احتجاج کرنے والے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے پولیس نے پانی کی تیز دھار اور آنسو گیس کا استعمال کیا۔

ریڈیو ہیڈ کی جانب سے ویلوٹ انڈی گراؤنڈ میں ہونے والے اس حملے کو عدم برداشت پر مبنی تشدد قرار دیا ہے۔

مقامی میڈیا کے مطابق حملہ آوروں نے بوتلوں اور ڈنڈوں کا استعمال کیا۔

یہ میوزک سٹور ضلع بیوگلو میں موجود ہے جہاں ریڈیو ہیڈ کے نئے البم کو لائیو سٹریمنگ پر سنا جا رہا تھا۔

راک بینڈ نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ ’ہم استنبول میں موجود اپنے مداحوں کو اپنی محبت اور حمایت ہی پیش کر سکتے ہیں۔ تاہم ہم پرامید ہیں کہ ایک دن ہم اس قابل ہو جائیں گے کہ اس قسم کے واقعات کو قدیم دور کے پرتشدد اور عدم پرداشت پر مبنی واقعات کے طور پر دیکھیں۔‘

اسی بارے میں