’رستم‘ سے الیانا اور ایشا کی بالی وڈ میں واپسی

تصویر کے کاپی رائٹ HYPER PR
Image caption ليانا اور ایشا نے انڈسٹری میں اس وقفے سے کیا سیکھا یہ ان باتوں سے زیادہ رستم سے پتہ چلے گا

اکشے کمار کی نئی فلم ’رستم‘ سے اليانا ڈی كروز اور ایشا گپتا کی ایک عرصے بعد بالی وڈ میں واپسی ہو رہی ہے۔

یہ دونوں اداکارائیں جنوب کی فلمی صنعت میں تو فعال تھیں، لیکن بالی وڈ میں تقریباً دو سال سے ان کی کوئی فلم نہیں آئی۔

اليانا ڈی كروز بالی وڈ میں آخری بار 2014 میں سیف علی خان کے ساتھ فلم ’ہیپی اینڈنگ‘ میں نظر آئی تھیں۔

فلم رستم کے بارے میں بی بی سی سے خصوصی ملاقات میں اليانا نے شکایتی لہجے میں کہا ’برفی، میں تیرا ہیرو، پھٹا پوسٹر نکلا ہیرو اور ہیپی اینڈنگ جیسی فلمیں دینے کے باوجود انڈسٹری میں بہترین فلمیں آفر نہیں ہو رہی ہیں۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ HYPER PR
Image caption ٹينو دیسائی کی فلم ’رستم‘ 12 اگست کو ریلیز ہوئی ہے

اليانا کا کہنا ہے کہ ان کے پاس جو فلمیں تھیں ان میں سے کچھ شروع ہی نہیں ہو پائیں اور ساری ڈیٹس ضائع ہوگئیں اور دو سال برباد ہو گئے۔

ان کا کہنا ہے کہ ’شاید یہ قسمت کا ہی کھیل ہے۔‘

وہیں ایشا گپتا بالی وڈ میں اس فرق کے لیے قسمت سے زیادہ خود کو ہی ذمہ دار مانتی ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ HYPER PR
Image caption ان دونوں اداکاراؤں کی بالی وڈ میں تقریباً دو سال سے کوئی فلم نہیں آئی

ایشا کے مطابق: ’ایسی ویسی فلموں میں کام کرنے سے بہتر ہے کہ اچھی پیشکش کا انتظار کیا جائے، جو میں نے کیا۔ کئی فلمیں ملتوی ہونے کے بعد جب مجھے رستم کی آفر ملی تو لگا کہ اب میرا وقت آ گیا ہے۔‘

’جنت 2‘ اور ’ہم شكل‘ جیسی فلموں میں کام کرنے والی ایشا گپتا کہتی ہیں کہ ’اس انڈسٹری میں صبر کے ساتھ کام کرتے رہنا ضروری ہے۔ اکشے کمار کی بھی 12 فلمیں مسلسل فلاپ ہوئی تھیں، لیکن وہ اپنا کام کرتے رہے، بس کام کرتے رہنا چاہیے۔‘

اگرچہ دونوں اداکاراؤں کا خیال ہے کہ فلم رستم میں انھیں کافی اثر چھوڑنے والی اداکاری کرنے کا موقع ملا ہے اور انھیں امید ہے کہ ان کا کردار ناظرین کے ذہن میں اپنی چھاپ ضرور چھوڑے گا۔

اسی بارے میں