قطرینہ کے لیے سمیتا پاٹل ایوارڈ، مگر کیسے؟

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

اس ہفتے بالی ووڈ کی سب سے دلچسپ خبر قطرینہ کیف کو سمیتا پاٹل ایوارڈ دینے کے بارے میں ہے۔ چکنی چمیلی اور شیلا کی جوانی جیسے آیٹم نمبر کرنے والی قطرینہ اس اعزاز کی حقدار ہیں یا نہیں اس بارے میں سوشل میڈیا میں زبردست بحث چھڑی ہوئی ہے اور لوگ جس انداز میں اس خبر کا مذاق بنا رہے ہیں وہ بھی پڑھنے کے لائق ہے۔

ایک موصوف کا کہنا ہے کہ قطرینہ یقیناً اس خبر کے بعد گوگل پر یہ تلاش کر رہی ہوں گی کہ سمیتا پاٹل آخر ہیں کون۔ ایک ٹویٹ میں کہا گیا کہ قطرینہ کو سمیتا پاٹل ایوارڈ ملنا ساجد خان کو آسکر ملنے جیسا ہے۔

ویسے قطرینہ کو یہ اعزاز دینے کے اعلان کے بعد تو غالباً خود سمیتا پاٹل کی روح کانپ گئی ہوگی اور اگر اس ایوارڈ کا میعار یہی رہا تو کہیں ایسا نہ ہو کہ اگلے سال راکھی ساونت خود کو اس ایوارڈ کا حقدار قرار دیدیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

رشی کپور یوں تو سوشل میڈیا پر ضرورت سے زیادہ ہی سرگرم رہتے ہیں اور چیلنج کرنے والوں کو اپنی ٹویٹس کے ذریعے منہ توڑ جواب بھی دیتے ہیں، لیکن خبر ہے کہ اس ہفتے انھوں نے سچ مچ ایک نامہ نگار کا منہ توڑنے کی کوشش کی۔

کپور خاندان دوسرے فلمی خاندانوں کی طرح ہر سال گنپتی فیسٹیول مناتا ہے اور اس فیسٹیول میں بھگوان گنپتی کی مورتی کو سمندر میں بہانے کی رسم ادا کی جاتی ہے۔ رشی کپور جب اپنے بھائی رندھیر کپور، راجیو کپور اور بیٹے رنبیر کپور کے ساتھ ساحل سمندر کے لیے نکلے تو حسب معمول میڈیا بھی انکے ساتھ چل پڑا۔ اس دوران ہجوم اور ہنگامہ اتنا بڑھا کہ تصویریں لینے پر دونوں بھائی برہم ہو گئے اور میڈیا کے ساتھ ہاتھا پائی شروع کر دی۔

اس واقعے پر میڈیا اور سوشل میڈیا میں کافی ہنگامہ ہوا اور یہ بات رشی کپور کو اچھی نہیں لگی۔ لیکن رشی کپور کو یہ بھی یاد رکھنے کی ضرورت ہے کہ وہ ایک مشہور شخصیت ہیں اور اس طرح عوامی مقامات پر نکلیں تو ایسے ہنگاموں، ہجوم اور میڈیا کے لیے تیار رہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

خبریں تھیں کہ اگلے سال 26 جنوری کے موقع پر شاہ رخ اور ریتک اپنی اپنی فلموں ’رئیں‘ اور قابل‘ کے ساتھ ٹکرائیں گے۔ اب ایسی خبریں بھی آ رہی ہیں کہ 2018 میں بھی دونوں ایک دوسرے کے آمنے سامنے آ سکتے ہیں۔ ریتک اپنی فلم ’ کرش فور‘ اور شاہ رخ آنند ایل رائے کی فلم لیکر ایک وقت پر باکس آفس پر نمودار ہونگے۔

یہ فلمیں ریلیز ہونے میں ابھی کافی وقت باقی ہے لیکن چونکہ سال کے بڑے بڑے تہواروں اور تاریخوں کی ریلیز کا اعلان پہلے ہی کر دیا جاتا ہے اس لیے اب دیکھنا ہوگا کہ دونوں فلسماز اس ٹکراؤ کے لیے تیار ہوں گے یا پھر نئی تاریحوں کا اعلان کریں گے کیونکہ چاہے وہ شاہ رخ ہوں یا ریتک دونوں ہی اپنی اپنی فلاپ فلموں کے بعد ایک اور فلاپ فلم کے لیے تیار نہیں ہوں گے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

کرن جوہر کی فلم ’اے دل ہے مشکل‘ کی ریلیز سے پہلے فلم کے پروموش کے تکلفات تقریباً پورے ہو چکے ہیں یعنی فلم کے پوسٹر ٹریلرز اور تنازع سبھی کام مکمل کر لیے گئے ۔

فلم 28 اکتوبر کو ریلیز ہوگی۔ فلم کے ٹریلرز میں نوجوان رنبیر کپور اور 44 سال کی سابق مس ورلڈ ایشوریہ رائے کی کیمسٹری کے خاصے چرچے ہیں اور خبریں ہیں کہ ایش کے سسر امیتابھ بچن کو فلم میں ایش اور رنبیر کے درمیان قربت کے مناظر پسند نہیں آئے اور غالباً انہوں نے اس کا اظہار کرن جوہر کے سامنے بھی کیا۔ اب معلوم نہیں کہ یہ بات واقعی درست ہے یا پھر یہ بھی فلم کے پروموشن کا حصہ ہے۔

متعلقہ عنوانات