کابینہ میں 59 نۓ وزرا

Image caption جن نئے چودہ کابینی وزرا کو شامل کیا گیا ہے ان میں بیشتر کا تعلق کانگریس سے ہے ۔

ہندوستان کے وزیر اعظم منموہن سنگھ نے اپنی کابینہ میں توسیع کے لیے 59 ناموں کی فہرست صدر مملکت کو بھیجی ہے۔ نئی کابینہ میں اب مجموعی طورپر 78 وزرا ہونگے۔ نئے وزرا کی حلف برداری جمعرات کو ہو گی۔

کانگریس کی صدر سونیا گاندھی کے ساتھ تقریباً چار گھنٹے تک صلاح و مشورے کے بعد وزیر اعظم منموہن سنگھ نے اپنی وزارتی کونسل کے لیے چودہ کابینی، سات آزاد چارجز کے وزراء مملکت اور 38 وزراء مملکت کے ناموں کو حتمی شکل دی۔

اس سے قبل 22 مئی کو وزیر اعظم کے ساتھ 19 کابینی وزرا کی حلف برداری عمل میں آئی تھی ۔ اب وزارتی کونسل میں مجموعی طور پر33 کابینی وزرا ہونگے ۔

جن نئے چودہ کابینی وزرا کو شامل کیا گیا ہے ان میں بیشتر کا تعلق کانگریس سے ہے ۔ اس میں اتحادی ڈی ایم کے اور نیشنل کانفرنس کے وزرا بھی شامل کیے گئے ہیں۔

نئے وزرا میں مہاراشٹر کے سابق وزیر اعلی ولاس راؤ دیش مکھ ، ڈاکٹر فاروق عبداللہ ، دیا ندھی مارن ، کماری شیلجہ اور ڈاکٹر ایم ایس گل کے نام قابل ذکر ہیں۔

شری پرکاش حیسوال ، سلمان خورشید ، جے رام رمیش، پرفل پٹیل اور پرتھوی راج چوہان کے نام وزراء مملکت کی فہرست میں ہیں لیکن انہیں جو بھی وزارت ملے گی اس کے وہ آزادانہ طور پر انچارج ہو نگے۔

منموہن کی نئی کابینہ میں سچن پائلٹ ، جتن پرساد ، جیوتر آدتیہ سندھیا اور اگاتھا سنگما جیسے نوجوان ارکان کو بھی جگہ دی گئی ہے ۔ انہیں وزراء مملکت بنایا گیا ہے۔

اتحادی ترنمول کانگریس کی رہنا ممتا بنرجی تو پہلے ہی ریلوے کی وزیر بنائی جا چکی ہیں، اب ان کی جماعت کے چھ ارکان کو وزرا ملکت بنایا گیا ہے۔ ڈی ایم کے بھی چار ارکان وزراء مملکت کی فہرست میں شامل ہیں۔

گجرات کا کوئی بھی رکن کابینہ درجے کا وزیر نہیں بنایا گیا ہے۔ وزرا کے قلمدانوں کا بھی فیصلہ کیا جا چکا ہے لیکن اس کا اعلان جمعرات کو حلف برداری کے بعد کیے جانے کی توقع ہے۔

اسی بارے میں