سی آر پی ایف کے بارہ اہل کار ہلاک

فائل فوٹو
Image caption سی آر پی ایف جوان ماؤنواز کے حملوں میں اکثر مارے جاتے ہیں

بھارت کی ریاست چھتیس گڑھ میں تعینات سینٹرل ریزرو پولیس فورس کے ایک جوان نے اپنے ہی چھ ساتھیوں کو گولی مار کر ہلاک کردیا ہے۔

بعد میں اسے بھی گولی مار کر ہلاک کر دیا گیا ہے۔

ہلاک ہونے والوں میں ایک اسسٹنٹ کمانڈنٹ بھی شامل ہیں۔ یہ واقعہ ضلع سرائےکیلا میں سی آر پی ایف کے ایک کیمپ میں پیش آیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق گزشتہ رات کانسٹبل ہر پندر سنگھ نے اپنے ساتھیوں پر اندھا دھند فائرنگ کرنی شروع کردی۔ بعد میں دیگر اہلکاروں نے ہر پندر سنگھ کو بھی ہلاک کر دیا۔

اس واقعے میں ایک کانسٹبل زخمی بھی ہوا جسے جمشید پور کے ہسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔

اس سے قبل ایک دوسرے واقعے میں جھارکھنڈ میں ہی ایک مقام پر ماؤنواز باغیوں نے سینٹرل ریزرو پولیس فورس کے پانچ جوانوں کو ہلاک کر دیا تھا۔

یہ واقعہ لتیہار ضلعے کا ہے، اطلاعات کے مطابق سی آر پی ایف کے جوان بارودی سرنگ کی زد میں آکر ہلاک ہو ئے ہیں۔ اس واقعے میں پانچ اہلکار شدید طور پر زخمی ہوئے ہیں۔

حکام کے مطابق گھنے جنگلوں میں پولیس فورسز کا ایک دستہ ماؤنوازوں کے بعض ٹھکانوں کو تباہ کر کے واپس آرہا تھا کہ بارودی سرنگ کی زد میں اگیا۔

اس واقعے میں پانچ جوان موقع پر ہی ہلاک ہوگئے جبکہ پانچ دیگر جوانوں کو رانچی کے ہسپتال میں داخل کرادیا گیا ہے۔

اسی بارے میں