’ایل او سی پر بھارتی فوجی ہلاک‘

ایل او سی پر بھارتی فوجی
Image caption ہلاک ہونے والے فوجی کی شناخت نہیں ہوسکی ہے۔

بھارت کے زیر انتظام کشمیر میں فوج نے دعویٰ کیا ہے کہ کنٹرول لائن پر پاکستانی فوج کی فائرنگ سے ایک بھارتی فوجی ہلاک ہوگیا ہے۔

بھارتی فوج کی شمالی کمانڈ نے دعویٰ کیا ہے کہ کنٹرول لائن پربھارتی فوج کا ایک جوان پاکستانی فوج کی بلااشتعال فائرنگ سے ہلاک ہوگیا ہے۔

ہمارے نامہ نگار ریاض مسرور سے فون پر بات کرتے ہوئے اودھم پور میں مقیم فوج کی شمالی کمانڈ کے ترجمان کرنل بپلب ناتھ نے بتایا: ’پاکستان نے سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی کی ہے۔ اتوار کی شام پاکستان کی افواج نے خود کار بندوقوں اور راکٹ پروجیکٹائل رائفلوں سے کنٹرول لائن پر ہماری اگلی چوکی پر گولی باری کی جس میں ایک جوان شہید ہوگیا۔‘

کرنل ناتھ کے مطابق پاکستانی فوج نے یہ حملہ پونچھ ضلع میں کرشناگھاٹی سیکٹر کی ننگی ٹھیکری چوکی پر کیا۔ تاہم انہوں نے بتایا کہ مارے گئے فوجی کی شناخت نہیں ہوسکی ہے۔

واضح رہے سات سو چالیس کلومیٹر لمبی اور چونتیس کلومیٹر چوڑی کنٹرول لائن جموں کشمیر کو بھارت اور پاکستان میں تقسیم کرتی ہے۔

کنٹرول لائن پر دونوں ملکوں نے دو ہزار تین میں جنگ بندی کا معاہدہ کیا ہے۔

کرنل ناتھ نے بتایا کہ پاکستان نے پچھلے سات سال میں متعدد مرتبہ فائر بندی کے اس معاہدے کی خلاف ورزی کی ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ بھارتی افواج نے ضبط سے کام لیا اور فائرنگ کا جواب نہیں دیا۔

واضح رہے کہ کشمیر میں پچھلے تین سال سے علیحدگی پسندوں نے غیر مسلح تحریک کا آغاز کیا ہے۔

بھارتی فوج کے سربراہ نے حالیہ بیان میں کہا ہے کہ چھ سو مسلح شدت پسند پاکستانی زیرانتظام علاقے میں بھارتی حدود میں داخل ہوکر تشدد پھیلانے کا منصوبہ بنا رہے ہیں۔

اس دوران کشمیر میں سید علی گیلانی کی کال پر پیر کو بھی ہڑتال رہی۔ انہوں نے پیر کی دوپہر اگلے پندرہ روز تک ہڑتال اور احتجاج کا کیلنڈر جاری کر دیا ہے۔

اسی بارے میں