الفا کے اہم رہنما برما میں گرفتار

Image caption حراست میں لیے گئے صحافی کے بارے میں معلومات فراہم نہیں کی گئی

بھارت کی حکومت کا کہنا ہے کہ شمال مشرقی ریاست آسام میں سرگرم علٰیحدگی پسند تنظیم الفا کے ایک اہم رہنما اور ایک بھارتی صحافی کو برما میں حراست میں لے لیا گیا ہے۔

اس بات کی تصدیق اتوار کو بھارت کے سیکرٹری داخلہ آر کے سنگھ نے کی۔

اس سے قبل بھارتی خبر رساں ایجنسی پی ٹی آئی کے مطابق آر کے سنگھ نے بتایا ہے کہ الفا کے اہم لیڈر پریش برووا کے بارے میں کوئی پختہ معلومات نہیں مل پائی ہیں۔

پی ٹی آئی کو دیے گئے بیان میں آر کے سنگھ نے کہا ’ہمارے پاس معلومات ہیں کہ جیون موران نامی الفا رہنما اور ایک بھارتی صحافی کو برما میں حراست لیا گیا ہے۔ ابھی تک ہمیں پریش برووا کے بار ے میں کوئی معلومات نہیں ملی ہیں۔‘

انہوں نےحراست میں لیے گئے صحافی کے بارے میں کوئی معلومات فراہم نہیں کیں۔

جیون موران، پریش برووا کی قیادت والی علٰیحدگی پسند تنظیم الفا کے سخت دھڑے کے دوسرے بڑے رہنما ہیں۔

اطلاعات ہیں کہ جس صحافی کو حراست میں لیا گیا ہے وہ گوہاٹی کے مقامی اخبار کے لیے کام کرتے ہیں۔

خیال کیا جا رہا ہے کہ یہ صحافی پریش برووا سے انٹریو کرنے جا رہے تھے۔

اطلاعات ہیں کہ دونوں افراد کو حراست میں لینے کے بعد برما کے اہلکاروں نے بھارتی حکومت کو اس معاملے کے بارے میں بتایا ہے۔

دونوں افراد کو چین سے متصل برما کے شمالی علاقہ سے حراست میں لیا گیا ہے۔

ابھی یہ واضح نہیں ہے کہ انہیں کن حالات میں حراست میں لیا گیا ہے۔

خیال ہے کہ پریش برووا چین اور برما میں بھی رہتے ہیں اور وہ اکثر وہاں جاتے رہتے ہیں۔

اسی بارے میں