بارودی سرنگ کا دھماکہ، تیرہ اہلکار ہلاک

مرکزی رزرو پولیس فورس تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption جھارکھنڈ میں ماؤنواز سرگرم ہیں

بھارتی ریاست جھارکھنڈ کے ضلع گڑھوا میں بارودی سرنگ کے دھماکے میں مقامی تھانے کے انچارج سمیت تیرہ پولیس اہلکار ہلاک ہوگئے ہیں۔

یہ واقعہ جھارکھنڈ کے دارالحکومت رانچی سے تقریباً دو سو کلومیٹر دور بھنڈریا کے جنگلی علاقے میں سنیچر کی دوپہر پیش آیا۔

یہ دھماکہ اس وقت ہوا جب نگر پنچایت کی صدر سشما مہتا کا وفد علاقے سے گزر رہا تھا۔

عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ پہلے ایک بارودی سرنگ کا دھماکہ ہوا جس کے بعد پولیس اہلکاروں پر فائرنگ کر دی گئی۔

پولیس ڈائریکٹر جنرل راج کمار ملک کے مطابق ضلع کونسل کی صدر کی گاڑی گزرنے کے بعد جب پولیس کی گاڑی گزری تو بارودي سرنگ پھٹ گئی۔ اس گاڑی میں پندرہ پولیس اہلکار سوار تھے۔

ماؤ نواز باغیوں نے اس حملے کے دوران دھماکے کے بعد زندہ بچ جانے والے سکیورٹی اہلکاروں پرگھات لگا کر فائرنگ کی اور اس دوران زخمی جوان جب گاڑی سے باہر نکلے تو ماؤ نواز باغیوں نے انہیں واپس جلتی گاڑی میں پھینک دیا۔

زخمیوں میں سے دو جوانوں ڈینیل كجر اور سنیل کمار کو جوگڑھوا کے باشندے ہیں، ماؤ نواز باغیوں نے ابتدائی طبی امداد بھی دی اور پھر وہ سکیورٹی اہلکاروں کے ہتھیار لے کر فرار ہوگئے۔

اسی بارے میں