بھارت، وزارت عظمٰی کا دفتر بھی ٹوئٹر پر

تصویر کے کاپی رائٹ PTI
Image caption وزیراعظم منموہن سنگھ کے دفتر کو ٹوئٹر سے لنک کیا گيا ہے

ٰبھارت میں وزارت عظمٰی کا دفتر بھی اب مائیکرو بلاگنگ کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر آگیا ہے اور اس دفتر سے منسلک کام کاج اور معلومات کو ٹوئٹر پر بھی دیکھا جا سکے گا۔

حالانکہ حالیہ دنوں میں انٹرنیٹ کے بارے میں بھارتی حکومت کا رویہ قدر منفی رہا ہے اور کئی ویب سائٹوں کو بلاک کرنے کی بات ہوئی ہے۔

لیکن حکومت کے اس قدم سے سماجی رابطے کی ویب سائٹس کی بڑھتی اہمیت اور ان کی مقبولیت کو سمجھا جا سکتا ہے۔

بی بی سی ہندی سروس کے سابق پروڈیوسر پکنچ پچوری کو وزیراعظم نے میڈیا کا اپنا نیا مشیر مقرر کیا ہے اور ٹوئٹر سے متعلق انہوں نے ہی اطلاع دی ہے۔

پکنج پچوری نے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر اس سے متعلق لکھا ہے اور کہا ہے کہ لوگ اب وزیراعظم کے دفتر سے متعلق معلومات ٹوئٹر پر بھی حاصل کر سکتے ہیں۔

وزیراعظم کے دفتر کا اکاؤنٹ ہے PMOIndia@ اور اس پر وزیراعظم منموہن سنگھ کی تصویر بھی لگی ہوئی ہے۔ اسے پی ایم او کی ویب سائٹ سے لنک کیا گيا ہے۔

پیر سے اب تک اس کو تقریباً چھ ہزار سے زیادہ لوگ فالو کر چکے ہیں جس میں کابینہ کے وزیر بھی شامل ہیں۔

لیکن وزیراعظم کے دفتر کی جانب سے کسی دوسرے کو فالو نہیں کیا گیا ہے۔

بھارت میں وزارت خارجہ پہلے ہی سے ٹوئٹر پر ہے اور دفتر خارجہ کے ترجمان وشنو پرکاش اس پر مختلف مسائل پر ٹوئٹ کرتے رہتے ہیں۔

اسی بارے میں