علیگڑھ مسلم یونیورسٹی میں احتجاج

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption علی گڑھ کی طالبات مساوی حقوق کا مطالبہ کر رہی ہیں

بھارت کی معروف علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں طالبات کو لائبریری تک رسائی نہ ملنے کے خلاف طالبات نے انتظامیہ کے خلاف مہم شروع کی ہے۔

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں تعلیمِ نسواں کے لیے معروف عبداللہ کالج کی طالبات کو روایتی طور پر یونیورسٹی کی سینٹرل ’مولانا ابولکلام آزاد لائبریری‘ کی رکنیت نہیں دی جاتی ہے۔

طالبات کا مطالبہ ہے کہ انہیں سینٹرل لائبریری کی بھی رکنیت دی جائے تاکہ وہ لائبریری جا سکیں اور اس سے مستفید ہو سکیں۔

ا ن کا کہنا ہے کہ یہ امتیازی سلوک ہے اور اس کے خلاف وزارتِ تعلیم سے بھی شکایت کی گئی ہے۔

انسانی وسائل اور تعلیمی امور کے مرکزی وزیر کپل سبّل نے اس سے متعلق ایک سوال کے جواب میں اس بات کی تصدیق کی کہ یہ معاملہ ان کے پاس آيا تھا۔

ان کا کہنا تھا ’ہمیں اس سے متعلق بتایا گيا تھا اور ہمارا موقف ہے کہ طلباء کی طرح طالبات کو بھی لائبریری تک رسائی ہونی چاہیے۔‘

یونیورسٹی کے ترجمان ابرار احمد نے فون پر بی بی سی سے بات چيت میں کہا کہ جس طرح ہر شعبہ کی اپنی ایک الگ لائبریری ہے اسی طرح عبداللہ کالج کی اپنی خود کی لائبریری ہے۔

’بعض افراد نے اس کو ایک مسئلہ بنا لیا ہے، اس میں کچھ اساتذہ بھی ملوث ہیں۔ خواتین کے لیے جو لائبریری ہے وہ بہت وسیع ہے اور اگر اس میں کوئی کمی ہے تو اسے مزید وسیع کیا جا رہا ہے۔‘

انہوں نے کہا کہ سینٹرل لائبریری کا کیٹلاگ بھی آن لائن دستیاب ہے اور طالبات سے کہا گیا ہے اگر انہیں کوئی کتاب نہ ملے تو ان کے کہنے پر وہ کتاب دستیاب کرائی جائے گی۔

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption مولانا آزاد لائبریری ایشاء کی بہترین لائبریر مانی جاتی ہے

’سینٹرل لائبریری میں اب گنجائش بھی کم ہے اور اس میں ضرورت سے زیادہ بھیڑ ہو جاتی ہے اسی لیے اسے وسیع کیا جا رہا ہے اور مختلف دیگر لائبریروں کو بھی وسیع جا رہا ہے تاکہ ان مشکلات سے نمٹا جا سکے۔‘

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں انڈر گریجویٹ طالبات کے لیے عبداللہ ہال معروف ہے جہاں وہ رہتی ہیں اور انہیں چھٹی کے علاوہ باہر نکلنے کی اجازت نہیں ہوتی ہے۔

طالبات کو اتوار کو باہر جانے کی اجازت ہوتی ہے اور انہیں سینٹرل مولانا آزاد لائبریری کی رکنیت نہ دیے جانے کی ایک وجہ یہ بھی بتائی جاتی ہے۔

مولانا آزاد لائبریری کو ایشاء کی بہترین لائبریریوں میں ایک مانا جاتا ہے جس میں دنیا کی کتابوں کا ذخیرہ ہے۔

اسی بارے میں