’پاکستان جنگ بندی کی خلاف ورزیاں کر رہا ہے‘

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption بھارت کا الزام ہے کہ پاکستان نے سیز فائر کی خلاف ورزی کی

بھارت کا کہنا ہے کہ رواں سال میں پاکستان نے جموں کشمیر کی لائن آف کنٹرول پر آٹھ بار جنگ بندی کے معاہدے کی خلاف ورزی کی ہے۔

بھارت نے اس کے لیے پڑوسی ملک کے ساتھ سخت احتجاج بھی کیا ہے۔

منگل کو پارلیمان کے ایوان زیریں یعنی لوک سبھا میں داخلی امور کے وزیر مملکت ملاّپلی رام چندرن نے ایک بیان دیتے ہوئے کہا کہ جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی کے آٹھ واقعات رونما ہوئے ہیں۔

ان کا کہنا تھا ’خلاف ورزیوں کے تمام واقعات کی تفتیش کی گئی ہے اور پاکستان کے فوجی حکام سے مناسب سطح پر ہاٹ لائن کے ذریعے اس مسئلے پر شکایت کی گئي ہے۔‘

ان کا کہنا تھا کہ بھارت نے اس مسئلے کو گزشتہ برس جون میں اسلام آباد میں ہونے والی خارجہ سیکرٹری کی سطح کی ملاقات میں بھی پاکستان کے ساتھ اٹھایا تھا۔

بھارت اور پاکستان کے درمیان ایک معاہدے کے تحت جموں و کشمیر کی لائن آف کنٹرول پر سیز فائر نافذ العمل ہے۔

لیکن اس کے باوجود فریقین وقتاً فوقتاً ایک دوسرے پر جنگ بندی کے معاہدے کی خلاف ورزی کا الزام لگاتے رہے ہیں۔

اسی بارے میں