بس کھائی میں گر گئی، بائیس افراد ہلاک

آخری وقت اشاعت:  بدھ 8 اگست 2012 ,‭ 07:57 GMT 12:57 PST
بس حادثہ

ہلاک ہونے والوں میں پانچ خواتین بھی شامل ہیں

بھارت کی شمال مشرقی ریاست میگھالیہ میں ایک بس کے کھائي میں گرنے کی وجہ سے اس میں سوار بائیس افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔

یہ واقعہ بدھ کی صبح میگھالیہ کے مشرقی پہاڑیوں کے جینتیہ کے علاقے میں پیش آیا ہے جس میں متعدد افراد زخمی بھی ہوئے ہیں۔

حکام کا کہنا ہے کہ اس واقعے میں مزید افراد کے ہلاک ہونے کا اندیشہ ہے کیونکہ حادثے کی شکار بس میں بہت سے لوگ سوار تھے۔

اطلاعات کے مطابق یہ بس تری پورہ جا رہی تھی اور یہ حادثہ آسام سے متصل میگھالیہ کی سرحد کے پاس صبح کے تقریباً پانچ بجے پیش آیا۔

شیلانگ میں ضلعی سطح کے پولیس سربراہ ایم کے ڈھکار نے بھارتی خبر رساں ادارے پی ٹی آئی کو بتایا کہ حادثہ کی جگہ امدادی کارروائیاں جاری ہیں۔

ان کا کہنا تھا ’ہم نے گہری کھائی سے بائیس لاشیں نکال لی ہیں۔ چھ افراد شدید زخمی ہیں اور انہیں ہسپتال منتقل کیا گیا ہے۔‘

ڈھکار نے مزید کہا ’اس میں مزید افراد کے ہلاک ہونے کا امکان ہے۔ ضلع کی پولیس اور فائر سروسز کے اہلکار اس بس میں پھنسے ہوئے مزید افراد کو باہر نکالنے کا کام کر رہے ہیں۔‘

بھارت میں پہاڑی علاقوں میں آمد و رفت کے لیے راستے اچھے نہیں ہیں اور ایسے علاقوں میں بسیں، کاریں اور دیگر گاڑیاں حادثات کا شکار ہوتی رہتی ہیں۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔