بھارتی بحریہ کا میزائل کا کامیاب تجربہ

آخری وقت اشاعت:  اتوار 7 اکتوبر 2012 ,‭ 11:24 GMT 16:24 PST

برہمومیزائل تین سو کلو میٹر کے فاصلے تک مار کر سکتا ہے

بھارتی بحریہ نے اتوار کو برہمو نامی سُپر سونک کروز میزائل کا ایک کامیاب تجربہ کیا ہے جو تقریبا تین سو کلو میٹر تک مار کرسکتا ہے۔

بحریہ نے یہ تجربہ ریاست گوا کے ساحل پر اپنے جنگی جہاز سے کیا ہے۔

بھارت نے روس کی مدد سے مشترکہ طور پر برہمو میزائل تیار کیا ہے۔ اس سے پہلے بھی اس کا تجربہ ہوچکا ہے لیکن اس بار اس میں بعض دیگر فیچرز کو بھی متعارف کیا گیا ہے۔

بھارتی خبر رساں ادارے پی ٹی آئی کے مطابق تجربے کے طور پر یہ میزائل بغیر ہتھیاروں کے لانچ کیا گيا جس نے حدف بنائےگئے جہاز کو نشانہ بنایا۔

اطلاعات کے مطابق میزائل کی مار بہت گہری تھی اور جس جہاز کو اس نے نشانہ بنایا اس پر گرتے ہی وہ آگ کے شعلوں میں تھا۔

بھارتی بحریہ کے ذرائع کے مطابق یہ کروز میزائل سیدھا جانے کے بجائے فضاء میں مختلف موڑ لے کر حدف کو نشانہ بناتا ہے۔

اس کا مقصد یہ ہے کہ دشمن کو یہ پتہ نا چل سکے کہ میزائل کس سمت سے آيا ہے اور اس کا فائدہ یہ کہ جس جنگی جہاز سے اسے لانچ کیا جائے گا اسے جوابی کارروائی میں دشمن نشانہ نہیں بنا سکےگا۔

اسے گوا کے ساحل پر روس میں بنے جہاز آئی این ایس تیج سے لانچ کیا گيا۔ روس بھارت کے لیے اسی طرح کے دو مزید جنگی جہاز بنا رہا ہے جنہیں بھارتی بحریہ میں جلد ہی شامل کیا جائے گا۔

برہمو میزائل بھارتی بحریہ کی دو رجمنٹ میں پہلے ہی شامل کیا جا چکا ہے اور وزارتِ دفاع نے اروناچل پردیش کے ایک تیسرے بحری بیڑے میں اسے شامل کرنے کے کا فیصلہ کر لیا ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔