’بدعنوانی کے الزامات کا سامنا کروں گا‘

آخری وقت اشاعت:  اتوار 14 اکتوبر 2012 ,‭ 10:42 GMT 15:42 PST
سلمان خورشید

سلمان خورشید نے ایک پریس کانفرنس میں الزامات کو مسترد کیا ہے

بھارتی وزیرِ قانون سلمان خورشید کا کہنا ہے کہ ان پر سرکاری فنڈز میں بدعنوانی کے جو الزامات لگائےگئے ہیں وہ ان کا مقابلہ کریں گے۔

بدعنوانی کے خلاف تحریک چلانے والی تنظیم انڈیا اگینسٹ کرپشن کا کہنا ہے کہ سلمان خورشید کی اہلیہ لوئی خورشید کی ایک غیر سرکاری تنظیم نے جسمانی طور معذور افراد کی فلاح کے نام پر حکومتی فنڈز کا بیجا استعمال کیا ہے۔

سلمان خورشید ملک سے باہر تھے اور اتوار کی صبح جب وہ دلی کے ہوائی اڈے پر پہنچے تو ان کے خلاف مظاہرین نے زبردست احتجاج کیا۔

اس موقع پر انہوں نے بدعنوانی کے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا ’ہم پر جو بھی الزامات عائد کیےگئے ہیں ان سے ہم ثبوتوں سے نمٹیں گے‘۔

اس سے قبل مرکزی حکومت کے ایک سینیئر وزیر نرائن سوامی نے سلمان خورشید کا دفاع کرتے ہوئے ان پر عائد الزامات کو بےبنیاد بتایا تھا۔

ایک نجی ٹی وی چينل نے دکھایا ہے کہ سلمان خورشید کی اہلیہ لوئی خورشید کی تنظیم ’ذاکر حسین میموریل ٹرسٹ‘ نے معذوروں کی فلاح کے لیے مرکزی حکومت سے فنڈز حاصل کیے لیکن انہیں معذروں پر خرچ نہیں کیا۔

انڈیا اگينسٹ کرپشن کے کارکن اروند کیجری وال اور جسمانی طور پر معذور افراد کی بعض غیر سرکاری تنظیمیں اس کے خلاف احتجاج کر رہی ہیں۔

ان کا مطالبہ ہے کہ اس معاملے کی کسی آزاد ایجنسی سے انکوائری کرائی جائے اور سلمان خورشید استعفی دیں ورنہ انہیں برطرف کیا جائے۔

دلی میں کئی سو معذور افراد انڈیا اگيسنٹ کرپشن کے اروند کیجری وال کی قیادت میں سلمان خورشید کے خلاف دھرنا دے رہے ہیں۔

مظاہرین کا کہنا ہے کہ جب تک حکومت کارروائی نہیں کرتی اس وقت تک وہ اپنا احتجاج جاری رکھیں گے۔

لیکن ذاکر حسین میموریل ٹرسٹ کا کہنا ہے کہ اروند کیجری وال معذوروں کے سہارے اپنی سیاست چمکانے کی کوشش کر رہے ہیں۔

چند روز پہلے ہی انڈیا اگينسٹ کرپشن نے حکمراں جماعت کانگریس کی صدر سونیا گاندھی کے داماد براٹ واڈرا پر کرپشن کے الزامات عائد کیے تھے اور تفتیش کا مطالبہ کیا تھا لیکن حکومت ان سبھی کو مسترد کر چکی ہے۔

حکومت بدعنوانی کے خلاف غیر سرکاری تنظیموں کی مہم کو نظر انداز کرتی رہی ہے لیکن اب اس مہم سے سماج کے سبھی طبقے کے لوگ جڑتے نظر آرہے ہیں اور اس تحریک میں شدت آتی جارہی ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔