بھارت: آفت زدہ افراد کے لیے گوگل پرسن فا‎ئنڈر

Image caption اتراکھنڈ میں جہاں حکومت جنگی پیمانے پر امدادی کام میں مشغول ہے وہیں گوگل نے گمشدہ افراد کی تلاش کے لیے اپنی ایک ایپلیکیشن بھارت میں لانچ کی ہے

انٹرنیٹ کمپنی گوگل نے کہا ہے کہ اس نے بھارت کی شمالی ریاست اتراکھنڈ میں سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں لاپتہ افراد کے بارے میں معلومات فراہم کرنے کے لیے ایک ایپلیکیشن جاری کی ہے۔

اس ایپلیکیشن کا نام ہے ’پرسن فائنڈر‘ یا افراد کی تلاش ہے۔ اس کی مدد سے جہاں لوگ اپنے دوستوں اور رشتہ داروں کی گمشدگی کی معلومات دے سکتے وہیں انھیں تلاش بھی کر سکتے ہیں۔

گوگل مصنوعات کے سینئر مینیجر جینت میسور نے بتایا ’اتراکھنڈ سیلاب سے بری طرح متاثر ہوا ہے چونکہ ریاست کے زیادہ تر علاقوں تک رسائی انتہائی مشکل ہے، اس لیے گوگل ایسے آفت زدہ علاقوں کے لیے پرسن فائنڈر ایپلیکیشن لے کر آیا ہے۔‘

گوگل کی اس ایپلیکیشن نے 2011 میں جاپان میں آئی سونامی کے دوران لوگوں کو تلاش کرنے میں کافی مدد کی تھی۔

یاد رہے کہ اب تک اس قدرتی آفت میں 500 سے زیادہ افراد ہلاک ہو چکے ہیں جبکہ ایک اندازے کے مطابق ریاست کے مختلف مشکل گزار علاقوں میں اب بھی 50،000 سے زیادہ لوگ بے یارو مددگار پھنسے ہوئے ہیں۔

Image caption گوگل پرسن فائنڈر پر جاکر اپنے عزیزوں اور رشتے داروں کے بارے میں معلومات دے بھی سکتے ہیں اور انہیں تلاش بھی کر سکتے ہیں

البتہ حکومت نے متاثرین کی امداد اور ان کے رشتہ داروں کے لیے معلومات فراہم کرنے کے لیے ہیلپ لائن نمبر جاری کیے ہیں تاہم گوگل کی یہ سروس سرکاری انتظامات کے علاوہ ہیں۔

اس ایپلیکیشن کے ٹولز ہندی اور انگریزی دونوں زبانوں میں دستیاب ہیں۔

گوگل پرسن فائنڈر پر بھیجے گئے اعداد و شمار کو کوئی بھی انٹرنیٹ کے ذریعے دیکھ سکتا ہے۔

کوئی بھی شخص تلاش کے باکس میں جا کر اپنے جاننے والے یا رشتہ دار کا نام لکھ کر اسے تلاش سکتا ہے۔

اس ٹول کے ذریعہ متعلقہ شخص کا نام، اس کے خط و خال، گھر کا پتہ اور اس کی موجودہ حالت کے بارے میں معلومات حاصل کی جا سکتی ہے۔

اگر کسی کو ان کا واقف یا رشتے دار نہ مل رہا ہو تو وہ اس کی گمشدگی کی خبر پرسن فائنڈر پر پوسٹ بھی کر سکتا ہے۔

یہ ٹول پریس ایجنسیوں، غیرسرکاری تنظیموں اور دیگر لوگوں کو بھی اپنا ڈیٹا بیس شیئر کرنے کا اختیار دیتا ہے۔

اسی بارے میں