نتائج کیسے مرتب کیے جاتے ہیں!

آخری وقت اشاعت:  بدھ 7 نومبر 2012 ,‭ 19:44 GMT 00:44 PST

بی بی سی کس طرح سے امریکہ میں صدارتی انتخاب کے نتائج کی رپورٹنگ کرے گا؟

اس گائیڈ میں بتایا گیا ہے کہ نتائج کہاں سے آتے ہیں، ایگزٹ پول کیا ہوتے ہیں اور کس طرح ریاستوں کو کال دی جاتی ہے۔

بی بی سی کے انتخابی نتائج کے ذرائع کیا ہیں؟

بی بی سی اس سال اے بی سی نیٹ ورک کی ’سٹیٹ کال‘ یعنی ریاستوں کے بارے میں اعلانات کی رپورٹنگ کرے گا۔

جب اے بی سی سٹیٹ کال کرے گا تو اس وقت ہمارا واشنگٹن ڈیسک ہر امیدوار کے الیكٹورل کالج ووٹ کو اپ ڈیٹ کرے گا۔

اس کے علاوہ امریکی کانگریشنل نتائج خبر رساں ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس (اے پی) سے حاصل ہوں گے۔

یہ نتائج کس طرح سے آتے ہیں اور ’ممکنہ نتائج‘ کیا ہوتے ہیں؟

امکان یہ ہے کہ آغاز میں امریکی انتخابات کے نتائج ایگزٹ پولز یا جزوی نتائج پر مبنی ہوں گے۔ اس کا مطلب یہ ہے کہ جب تک ووٹوں کی گنتی مکمل نہیں ہوگی اس وقت تک ان نتائج کو ممکنہ نتائج ہی کہا جائے گا۔

اس کی وجہ یہ ہے کہ کسی بھی امیدوار کے لیے کسی ریاست کے نتائج کا اعلان اس وقت تک کے دستیاب نامکمل اعداد و شمار کی بنیاد پر ہوتا ہے۔

ان جگہوں پر جہاں کانٹے کا مقابلہ نہیں ہے، جیسے ہی ووٹنگ ختم ہوگی، اے بی سی اور دیگر امریکی میڈیا ایگزٹ پولز کی بنیاد پر ممکنہ کامیاب امیدوار کے نام کا اعلان کر سکتا ہے۔

لیکن جہاں مقابلہ بہت سخت ہے وہاں میڈیا ووٹوں کے اصل اعداد و شمار آنے کا انتظار کرے گا۔ اس میں کئی گھنٹے یا پوری رات بھی لگ سکتی ہے۔

کیا یہ ممکنہ نتائج کبھی غلط بھی ہوتے ہیں؟

ہاں، خاص طور پر اس وقت جب جیت کا فرق بہت کم ہوتا ہے۔

ایگزٹ پول کیا ہوتا ہے؟

ایگزٹ پول عوام سے ووٹنگ کے بعد کی گئی بات چیت کی بنیاد پر بنتے ہیں۔

اس سال ایگزٹ پول کا کام ایڈسن میڈیا ریسرچ اور مٹوفسكائی انٹرنیشنل کر رہے ہیں۔

بی بی سی کو ایگزٹ پول کے تفصیلی اعداد و شمار تک رسائی حاصل نہیں ہے۔

کیا واشنگٹن ڈی سی ایک ریاست ہے؟

نہیں، ڈی سی یا ڈسٹرکٹ آف کولمبیا ایک ریاست نہیں ہے لیکن اسے الیكٹورل کالج کے تین ووٹ ملتے ہیں۔ ڈی سی میں صدر کے انتخاب کے لیے تو ووٹ ڈالے جاتے ہیں لیکن یہاں سے سینیٹر یا کانگریس کے رکن منتخب نہیں ہوتے۔

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔