Got a TV Licence?

You need one to watch live TV on any channel or device, and BBC programmes on iPlayer. It’s the law.

Find out more
I don’t have a TV Licence.

خلاصہ

  1. پاکستان اور انڈیا نویں بار ایک روزہ میچوں کے کسی ٹورنامنٹ کے فائنل میں مدِمقابل تھے
  2. آئی سی سی کے زیرِ اہتمام 50 اووروں کے کسی ٹورنامنٹ کے فائنل میں یہ ٹیمیں پہلی بار آمنے سامنے آئیں
  3. پاکستان پہلی بار چیمپیئنز ٹرافی کے فائنل تک پہنچا اور فتح یاب ہوا جبکہ انڈیا اپنے اعزاز کے دفاع میں ناکام رہا
  4. دونوں ملکوں کے درمیان اب تک مجموعی طور پر 128 میچ کھیلے جا چکے ہیں جن میں سے 72 پاکستان نے جیتے، 52 میں انڈیا فاتح رہا، جب کہ چار بےنتیجہ ثابت ہوئے۔
  5. دونوں ٹیموں کے مابین اب تک کھیلے جانے والے ایک روزہ میچوں کے آٹھ فائنلز میں چھ پاکستان نے جب کہ دو انڈیا نے جیتے ہیں

لائیو رپورٹنگ

time_stated_uk

  1. لائیو صفحہ اب مزید اپ ڈیٹ نہیں کیا جا رہا

    چیمپیئنز ٹرافی کے فائنل پر بی بی سی اردو کا یہ لائیو صفحہ اب مزید اپ ڈیٹ نہیں کیا جا رہا

    میچ کی تفصیلی رپورٹ کے لیے یہاں کلک کریں

  2. بریکنگپاکستان نے ہمیں تمام شعبوں میں آؤٹ کلاس کر دیا

    شکست کے بعد انڈیا کے کپتان وراٹ کوہلی نے کہا ہے کہ ’میں پاکستانی ٹیم اور ان کے مداحوں کو مبارکباد دینا چاہتا ہوں۔ انھوں نے آج پھر ثابت کیا کہ جو دن ان کا ہے اس دن وہ کسی کو بھی ہرا سکتے ہیں۔ میں مایوس ضرور ہوں لیکن پاکستان نے آج ہمیں تمام شعبوں میں آؤٹ کلاس کر دیا۔ ہمیں اپنی غلطیوں سے سیکھ کر آگے بڑھنا ہوگا۔‘

  3. وزیراعظم کا پیغام، شاباش پاکستان کرکٹ ٹیم!

  4. بریکنگحسن علی مین آف دی ٹورنامنٹ قرار پائے

    • حسن علی کو ٹورنامنٹ میں ان کی شاندار کارکردگی پر ٹورنامنٹ کا بہترین کھلاڑی بھی قرار دیا گیا ہے
  5. بریکنگحسن علی کے لیے گولڈن بال

    حسن علی نے فائنل میں بھی اپنی عمدہ کارکردگی کا سلسلہ جاری رکھا اور ایک بار پھر تین وکٹیں حاصل کیں۔ اس طرح اس ٹورنامنٹ میں ان کی وکٹوں کی مجموعی تعداد 13 ہو گئی جس پر انھیں ٹورنامنٹ کے بہترین بولر کا اعزاز دیا گیا ہے۔

  6. بریکنگشیکھر دھون کے لیے گولڈن بیٹ

    • انڈیا کے شیکھر دھون نے ٹورنامنٹ میں ایک سینچری اور دو نصف سنچریوں کی مدد سے سب سے زیادہ رنز بنائے اور چیمپیئنز ٹرافی کے بہترین بلے باز قرار پائے
  7. بریکنگفخر زمان مین آف دی میچ

    فخر زمان
    • اس ٹورنامنٹ میں پاکستان کے ٹاپ سکورر اور فائنل میں اپنے کریئر کی پہلی سنچری بنانے والے نوجوان اوپنر فخر زمان کو فائنل میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا ہے۔ فخر کی 106 گیندوں پر 114 رنز کی اننگز 12 چوکوں اور تین چھکوں سے مزین تھی
  8. بریکنگ2009 کے بعد پہلا عالمی اعزاز

    • 2009 میں ورلڈ ٹی 20 مقابلوں میں فتح کے بعد یہ پاکستان کی پہلی عالمی ٹرافی ہے۔
  9. بریکنگپاکستانی بولروں کی شاندار کارکردگی

    • پاکستان کی طرف سے محمد عامر نے یادگار بولنگ کرتے ہوئے چھ اووروں میں صرف 16 رنز دے کر ٹاپ آرڈر کی تین وکٹیں حاصل کیں۔
    • ان کے علاوہ حسن علی نے بھی اپنی عمدہ کارکردگی کا سلسلہ جاری رکھتے ہوئے ایک بار پھر تین وکٹیں حاصل کیں۔ اس طرح اس ٹورنامنٹ میں ان کی وکٹوں کی مجموعی تعداد 13 ہو گئی۔
    • ان کے علاوہ شاداب خان نے بھی اچھی بولنگ کرتے ہوئے دو وکٹیں لیں، تاہم وہ مہنگے ثابت ہوئے۔
    • ایک وکٹ جنید خان نے لی جب کہ انڈیا کی طرف سے پانڈیا رن آؤٹ ہوئے۔
    پاکستانی کھلاڑی
  10. زبردست بالنگ اور بیٹنگ

  11. پاکستان جیت کا حقدار تھا

  12. مبارک ہو پاکستان

  13. آئی سی سی کے کسی بھی ٹورنامنٹ کے فائنل میں سب سے بڑی فتح

  14. ہاں، پاکستان تم ہمیں ہرا چکے ہو، بہت مبارک ہو!

  15. بریکنگپاکستان نے پہلی مرتبہ آئی سی سی چیمپیئنز ٹرافی جیت لی

    • پاکستان نے لندن میں اوول کے میدان میں انڈیا کو 180 رنز سے شکست دے کر پہلی مرتبہ آئی سی سی چیمپیئنز ٹرافی جیت لی ہے۔
    • پاکستان نے پہلے کھیلتے ہوئے فخر زمان کی سنچری اور آخری اوور میں حفیظ کی جارحانہ بلے بازی کی بدولت 338 رنز بنائے
    • 339 رنز کے ہدف کے تعاقب میں دنیا کی بہترین بیٹنگ لائن اپ کی مالک انڈیا کی ٹیم پاکستانی بولرز کی تباہ کن بولنگ کا مقابلہ نہ کر سکی اور اوورز میں 158 رن بنا کر آؤٹ ہو گئی
    حسن علی
  16. انڈیا: 9-158

    انڈین اننگز کے 30 اوور مکمل ہو چکے ہیں اور 158 رنز کے مجموعے تک پہنچنے کی کوشش میں دنیا کا بہترین بیٹنگ لائن اپ رکھنے والی ٹیم نو وکٹیں کھو چکی ہے۔

  17. بریکنگپاکستان کی نویں کامیابی، حسن علی کی دوسری وکٹ

    حسن علی نے ایشون کو سرفراز کے ہاتھوں کیچ کروا کے پاکستان کو فائنل میں فتح سے ایک وکٹ کی دوری پر لا کھڑا کیا ہے۔ یہ اس ٹورنامنٹ میں ان کی 12ویں وکٹ تھی۔

    حسن علی
  18. جنید خان نے پاکستان کو آٹھویں وکٹ دلوا دی

    ساتویں وکٹ گرتے ہی پاکستانی کپتان نے جنید خان کو واپس بلایا جنھوں نے جدیجا کو سلپ میں کیچ کروا کے پاکستان کو آٹھویں وکٹ دلوا دی ہے

    جنید خان
  19. بریکنگپانڈیا رن آؤٹ، پاکستان کی ساتویں کامیابی

    پانڈیا نے صرف 43 گیندوں پر دھواں دھار اننگز کھیلتے ہوئے 76 رنز بنائے جن میں چار چوکے اور چھ بلند و بالا چھکے شامل تھے۔

    پانڈیا ایک تیز رن بناتے ہوئے اپنے ساتھی بلےباز جڈیجا کے ساتھ غلط فہمی کے نتیجے میں آؤٹ ہوئے۔

    پانڈیا
  20. پانڈیا کے مزید دو چھکے

    انڈیا: 6-152

    پانڈیا فخر زمان کو اپنی اننگز کا پانچواں اور چھٹا چھکا لگا کر انڈین تماشائیوں کے چہروں سے روٹھی مسکراہٹ واپس لے آئے ہیں۔