Got a TV Licence?

You need one to watch live TV on any channel or device, and BBC programmes on iPlayer. It’s the law.

Find out more
I don’t have a TV Licence.

لائیو رپورٹنگ

time_stated_uk

  1. کورونا

    دنیا بھر میں کورونا کے مصدقہ متاثرین کی تعداد 89 لاکھ سے زائد جبکہ ہلاکتوں کی مجموعی تعداد چار لاکھ 67 ہزار سے بڑھ گئی ہے۔ پاکستان میں متاثرین کی تعداد ایک لاکھ 80 ہزار سے زیادہ جبکہ اموات کی کُل تعداد 3587 ہے۔ برازیل، میکسیکو اور انڈیا کے بعد پاکستان ایسا ملک ہے جہاں اموات اور متاثرین کی تعداد کی شرح میں مسلسل تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔ پاکستان متاثرین کی عالمی فہرست میں 14ویں نمبر پر آ گیا ہے۔

    Catch up
    next
  2. کورونا: پلازمہ عطیہ کرنے کا کیا فائدہ ہے؟

    پاکستان میں پلازمہ کے عطیے سے کورونا وائرس کے مریضوں کو خاصی مدد ملتی ہے۔ طبی ماہرین کے مطابق پلازمہ کا عطیہ دینا بے حد ضروری ہے لیکن لوگوں میں اس بارے میں اب بھی بہت سے خدشات پائے جاتے ہیں۔

    پلازمہ کا عطیہ کیا ہے، یہ کیوں ضروری ہے اور یہ ہوتا کیسے ہے، ان تمام سوالات کے جواب دے رہے ہیں ڈاکٹر طاہر شمسی اس ویڈیو میں۔۔۔

    View more on youtube
  3. بریکنگبرازیل: ایک دن میں کورونا کے تقریباً 35 ہزار نئے کیس

    برازیل میں ایک دن میں کورونا وائرس کے 34,918 نئے کیس سامنے آئے ہیں جو اب تک یہاں سامنے آنے والے یومیہ کیسز کی سب سے بڑی تعداد ہے۔

    نئے کیس ایسے وقت میں سامنے آئے ہیں جب ایک اعلیٰ عہدیدار نے کہا تھا کہ حالات اب کنٹرول میں ہیں۔

    واضح رہے کہ امریکہ کے بعد دنیا بھر میں کورونا کے سب سے زیادہ متاثرین برازیل میں ہیں جہاں یہ تعداد 923000 سے زیادہ ہے۔

    کورونا
  4. لاہور میں سمارٹ لاک ڈاؤن: ’گھر کے صرف ایک شخص کو باہر نکلنے کی اجازت ہوگی‘

    ترہب اصغر، نامہ نگار لاہور

    Lahore

    گذشتہ رات لاہور کے کئی علاقوں میں سمارٹ لاک ڈاون لگا دیا گیا۔ محکمہ داخلہ پنجاب کی جانب سے جاری ہونے والے نوٹیفیکیشن کے مطابق سمارٹ لاک ڈاون تیس جون تک جاری رہے گا۔

    وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد نے اپنی پریس کانفرنس میں گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ سمارٹ لاک ڈاون لاہور کے ان علاقوں میں لگایا جا رہا ہے جہاں کورونا وائرس کے کیسز کی ایک بڑی تعداد موجود ہے۔

    Lahore
    Image caption: لاہور میں کرشن نگر میں ایک چیک پوائنٹ

    لاک ڈاؤن لگنے کے بعد متاثرہ علاقوں کو پولیس کی جانب سے روکاوٹیں لگا کر سیل کر دیا گیا اور یہ احکامات جاری کیے گئے کہ چودہ دن کے اس لاک ڈاؤن کے دوران ان علاقوں میں کسی شخص کو آنے یا ان سے باہر جانے کی اجازت نہیں ہو گی۔ اس کے علاوہ کسی بھی گھر سے صرف ایک فرد کو ہی کسی ضروری کام سے جانے کی اجازت مل سکے گی۔

    جاری ہونے وال نوٹیفیکیشن کے مطابق سیل شدہ تمام علاقوں کی زد میں آنے والے سرکاری اور پرائیوٹ دفاتر سمیت مارکیٹیں، شاپنگ مالز، اور ریستوران بھی چودہ دن کے لیے بند رہیں گے۔

    Gulberg
    Image caption: لاہور کا علاقہ گلبرگ

    اس کے ساتھ ساتھ پبلک اور پرائیوٹ ٹرانسپورٹ پر بھی پابندی ہوگی۔ ہر شخص کے لیے ماسک کا استعمال اور سماجی فاصلے کا خیال رکھنا لازمی ہوگا اور کسی کو بھی کسی قسم کا ہجوم گھر پر یا علاقے میں اکٹھا کرنے پر پابندی ہوگی جس میں مذہبی اجتماع بھی شامل ہوں گے۔

    تاہم علاقے میں کھانے پینے کی اشیا کی دکانیں اور میڈیکل سٹور بھی شام سات بجے تک کھلی رہ سکیں گی۔

  5. بریکنگکورونا: انڈیا میں اموات دس ہزار سے تجاوز کر گئیں

    انڈیا

    منگل کے روز انڈیا میں کورونا وائرس سے مزید دو ہزار اموات ہوئی ہیں جس کے بعد ملک میں اس وائرس سے ہونے والی ہلاکتوں کی تعداد 11903 ہو گئی ہے۔

    واضح رہے کہ انڈیا میں کورونا وائرس کے متاثرین کی تعداد 340000 ہے۔

    اخبار ہندوستان ٹائمز کے مطابق انڈیا میں کورونا وائرس سے ہونے والی اموات کی تعداد 2.9 فیصد سے بڑھ کر 3.4 فیصد ہو گئی ہے۔

  6. کورونا وائرس سے جڑی اصطلاحات کے معنی کیا ہیں؟

    کورونا وائرس کی عالمی وبا نے ہماری روزمرہ کی زندگی میں کئی نئے الفاظ اور اصطلاحات متعارف کرائی ہیں، چاہے بات قرنطینہ، وائرس، مدافعت یا سماجی فاصلے کی ہو لیکن آخر ان سب اصطلاحات کا مطلب کیا ہے؟

    ان تمام اصطلاحات کے معنی جاننے کے لیے آپ ہمارا ’کورونا وائرس مترجم‘ ٹول استعمال کر سکتے ہیں۔

    کورونا
  7. دنیا بھر میں سب سے زیادہ متاثرین والے دس ممالک کی فہرست میں انڈیا چوتھے نمبر پر

    Corona

    دنیا بھر میں اس وقت کل متاثرین کی تعداد 81 لاکھ 70 ہزار سے زیادہ ہے جبکہ عالمی سطح پر 4 لاکھ 40 ہزار سے زیادہ اموات ہو چکی ہیں۔ سب سے زیادہ متاثرین کی فہرست میں امریکہ پہلے نمبر پر ہے۔

    امریکہ میں متاثرین کی تعداد پانچ سب سے زیادہ متاثرہ ممالک کے باقی چار کی مجموعی تعداد سے بھی زیادہ ہے۔

    • امریکہ 2,137,731
    • برازیل 923,189
    • روس 544,725
    • انڈیا 354,065
    • برطانیہ 299,600
    • سپین 244,328
    • اٹلی 237,500
    • پیرو 237,156
    • فرانس 194,347
    • ایران 192,439
  8. رامفوسہ کو وائرس سے ہونے والی اموات کے لئے ’ذمہ دار‘ ٹھہرایا جائے گا

    جنوبی افریقہ

    جنوبی افریقہ میں اپوزیشن کے رہنما جولیس مالیما نے کہا ہے کہ معیشت کھولنے کے فیصلے کے بعد ملک میں کورونا وائرس سے ہونے والی اموات کا ذمہ دار صدر سرل رامفوسہ کو ٹھہرایا جائے گا۔

    مسٹر ملیما نے منگل کو جنوبی افریقہ کے یوم نوجوانان کی ورچوئل تقریبات کے دوران تقریر میں صدر پر ’سفید فام سرمایہ دارانہ نظام‘ کا حامی ہونے کا الزام عائد کیا۔

    اکنامک فریڈیم فائٹر پارٹی کے رہنما نے جنوبی افریقہ کے شہریوں کو محفوظ رہنے اور اپنے پیاروں کی وائرس سے حفاظت کے لیے زور ڈالا۔

    اس سے پہلے جولیس مالیما سکولوں اور عبادت گاہوں کو دوبارہ کھولنے کے فیصلے کی مخالفت کر چکے ہیں۔ انھوں نے اپنے حامیوں پر زور دیا کہ وہ عبادت کی جگہوں پر نہ جائیں۔

  9. بریکنگلاگوس میں کورونا متاثرین میں اضافہ، عبادت گاہیں کھولنے کا منصوبہ مؤخر

    Corona

    نائیجیریا کے سب سے گنجان آباد شہر لاگوس میں ریاستی حکومت نے غیر معینہ مدت کے لیے عبادت گاہوں کو بند کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔ اس سے پہلے گرجا گھروں اور مساجد کو اس ہفتے کھولا جانا تھا۔

    نائیجیریا میں اس وقت 16600 سے زیادہ کیسز سامنے آ چکے ہیں جن میں سے تقریباً نصف لاگوس میں ہیں۔

    نائیجیریا میں مارچ کے مہینے سے لاک ڈاؤن لاگو ہے تاہم حکام نے کہا تھا کہ وہ ہوٹلوں اور عبادت گاہوں کو اس ہفتے کھول دیں گے۔

    اگرچہ ٹیسٹنگ کو ایک لاکھ تک بڑھا دیا گیا ہے تاہم حکام کو کم ٹیسٹ کرنے کے حوالے سے شدید تنقید کا سامنا رہا ہے۔

    ملک کے دیگر حصوں میں لاک ڈاؤن میں نرمی اعلان شدہ منصوبے کے مطابق ہی کی جائے گی اور اس میں کوئی تبدیلی نہیں کی جا رہی ہے۔

  10. کورونا: روسی صدر کی حفاظت کے لیے خصوصی سرنگ تیار

    ولادیمیر پوتن

    روس کے صدر ولادیمیر پوتن کی کورونا وائرس سے حفاظت کے لیے ایک خاص ڈس انفیکشن سرنگ قائم کی گئی ہے اور روسی صدر سے ملنے آنے والے ہر شخص کو اس میں سے گزرنا پڑتا ہے۔

    یہ خصوصی سرنگ ایک روسی کمپنی نے تیار کی ہے اور اسے ولادیمیر پوتن کے دفتر کے باہر نصب کیا گیا ہے۔

    روس کی سرکاری نیوز ایجنسی کی جانب سے جاری ویڈیو میں اس سرنگ سے گزرنے والے افراد کو ماسک پہنے اور سپرے کے ذریعے ڈس انفیکیٹ کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔

    پوتن کے ترجمان ڈمٹری پیسکو نے اپریل میں کہا تھا کہ روسی صدر سے ملنے والے ہر شخص کا ٹیسٹ کیا جاتا ہے تاہم ایک ماہ بعد پیسکو نے کہا کہ وہ خود کورونا کا شکار ہو چکے ہیں۔

    واضح رہے کہ روس میں کورونا وائرس کے پانچ لاکھ سے زیادہ کیس سامنے آ چکے ہیں اور 7284 افراد اس وائرس سے ہلاک ہو چکے ہیں۔

    View more on twitter
  11. بریکنگبیجنگ میں لاکھوں لوگ اب نئی پابندیوں کی زد میں

    China

    بیجنگ میں کورونا وائرس کی دوسری لہر کے پیشِ نظر شہر میں نئی پابندیاں لاگو کر دی گئی ہیں جن کا اطلاق لاکھوں افراد پر ہوگا۔

    بیجنگ میں بدھ کے روز 31 نئے کیس سامنے آئے ہیں جس کے بعد گذشتہ ہفتے کی مجموعی تعداد 137 ہوگئی ہے۔ اس سے قبل چینی دارالحکومت میں 57 روز تک مقامی منتقلی والا کوئی کیس سامنے نہیں آیا تھا۔

    اس وقت شہر کے تقریباً 27 علاقے متوسط خطرے میں جبکہ ایک علاقہ شدید خطرے میں قرار دیا گیا ہے۔ ان علاقوں سے لوگ شہر سے باہر نہیں جا سکتے۔ کم خطرے والے علاقوں سے لوگ شہر سے ہابر جا سکتے ہیں مگر صرف اس وقت اگر ان کا ٹیسٹ منفی آیا ہو۔

    تاہم شہر میں ٹیسٹ کروانا اس وقت مشکل ہے۔ کم از کم تین ٹیسٹ سٹیشنز نے بی بی سی کو بتایا کہ جولائی تک کوئی ٹیسٹ دستیاب نہیں ہے۔ ٹیسٹنگ مراکز کے باہر لمبی قطاریں لگی ہوئی ہیں۔

    شہر سے متعدد پروازیں منسوخ کر دی گئی ہیں جبکہ 9 جولائی تک ریلوے سروس بھی محدود ہے۔

    شہر کے سکول اور کالجز کو بھی بند کر دیا گیا ہے۔

  12. پاکستان میں متاثرین کی مجموعی تعداد ڈیڑھ لاکھ سے زیادہ، ہلاکتیں تین ہزار کے قریب

    پاکستان

    پاکستان میں گذشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا وائرس کے 5839 نئے کیس سامنے آئے ہیں جبکہ 136 افراد ہلاک ہوئے ہیں۔

    اسی دوران 2047 افراد اس مرض سے صحت یاب بھی ہوئے ہیں۔

  13. کورونا: خواجہ سرا برادری کی مشکلات میں اضافہ

    جیسے جیسے پورے پاکستان میں کورونا وائرس کی وبا پھیل رہی ہے، ویسے ہی خواجہ سرا برادری کی مشکلات میں دن بدن اضافہ ہوتا جارہا ہے۔

    خواجہ سرا برادری کے لیے ترقی پسند قوانین ہونے کے باوجود یہ برادری سمجھتی ہے کہ ان کو بااختیار نہیں بنایا جا رہا۔ مزید دیکھیے شمائلہ جعفری اور فاخر منیر کی اس ویڈیو میں۔۔۔

    View more on youtube
  14. کورونا: پاکستان کے زیر انتظام کشمیر میں متاثرہ وزرا کی تعداد 4 ہو گئی

    ایم اے جرال، صحافی

    پاکستان کے زیر انتظام کشمیر کے وزیراعظم کے پریس سیکرٹری راجہ وسیم کے مطابق اس خطے میں مزید دو وزرا میں کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے جس کے بعد کورونا وائرس سے متاثرہ وزرا کی تعداد 4 ہوگئی ہے۔

    راجہ وسیم کے مطابق کورونا وائرس سے متاثر ہونے والوں میں ایک سئنیر وزیر چوہدری طارق فاروق جبکہ دوسرے وزیر اطلاعات مشتاق منہاس شامل ہیں۔

    راجہ وسیم کے مطابق دونوں نے اپنے آپ کو آئسولیٹ کر لیا ہے۔ ان کے مطابق اس خطے کی قانون ساز اسمبلی میں اب تک پانچ ممبران میں کورونا کی تشخیص ہوئی جن میں چار وزرا اور ایک اپوزیشن لیڈر شامل ہیں۔

    چوہدری طارق فاروق
    Image caption: سینئر وزیر چوہدری طارق فاروق
    مشتاق منہاس
    Image caption: مشتاق منہاس
  15. پاکستان میں آکسیجن سلینڈرز کی قلت، طلب اور قیمت بڑھنے سے مریضوں کو مشکلات درپیش

    آکسیجن

    پاکستان میں کورونا وائرس نے صحت کے نظام میں پائی جانے والی خامیاں اب واضح کر دی ہیں۔

    پاکستان میں کووڈ 19 کے پھیلاؤ کے ساتھ جہاں طبی عملے کے لیے حفاظتی سامان اور مریضوں کے لیے بستر، وینٹیلیٹرز، آئی سی یو وارڈز اور ادویات کی کمی محسوس کی جا رہی ہے تو وہیں اب آکسیجن کی قلت کا مسئلہ بھی سر اٹھا رہا ہے۔

    بڑے شہروں کے بڑے ہسپتالوں میں تو شاید آکسیجن کی قلت نہ ہو لیکن ان چند ایک بڑے شہروں کے علاوہ پاکستان کے بیشتر شہروں کے ہسپتالوں میں مریضوں کے لیے آکسیجن کی کمی واقع ہو رہی ہے۔

    خیبر پختونخوا کے ضلع پشاور اور ایبٹ آباد کے ہسپتالوں میں آکسیجن کا مرکزی نظام ہے۔ لیکن صوبے کے باقی 36 اضلاع کے ہسپتالوں میں آکسیجن کے سلینڈروں پر گزارہ ہوتا ہے۔ اگر یہ سلینڈر کم پڑ جائیں تو مریض کی جان کو خطرہ لاحق ہو جاتا ہے۔

    جانیے عزیزاللہ خان اور ترہب اصغر کی اس تحریر میں۔

  16. ایمبولینس چلا کر جانیں بچانے والی پاکستانی خاتون

    View more on youtube

    اسلام آباد کے نواحی علاقے پنڈ بگوال کی رہائشی نازیہ تنویر نے بطور مڈ وائف (دائی) کئی سال کام کرنے کے بعد کچھ بڑا کر دکھانے کی ٹھانی۔

    گاڑی چلانے کے شوق اور انسانوں کی خدمت کرنے کے جذبے نے انھیں ایمبولینس ڈرائیور بنا دیا۔

    آئیے ان کی کہانی ان کی زبانی سنتے ہیں کومل فاروق اور نیئر عباس کی اس ویڈیو میں۔۔۔

  17. کورونا وائرس: مشرقی ورجینیا میں وبا کے پھیلاؤ کی کڑیاں پانچ گرجا گھروں سے جا ملیں

    امریکی ریاست مشرقی ورجینیا کے گورنرجم جسٹس کے مطابق میں کووڈ 19 کے پھیلاؤ کی کڑیاں پانچ گرجا گھروں سے جا ملی ہیں۔

    انھوں نے ایک گرجا گھر کو ڈس انفیکٹ کرنے کے لیے نیشنل گارڈ کی مدد بھی مانگی تھی۔ اس گرجا گھر سے کم سے کم 28 افراد کورونا وائرس سے متاثر ہوئے تھے۔

    انھوں نے کہا کہ ’یہ وبا انتہائی ہلاکت خیز اور خطرناک ہے۔ انھوں نے کہا کہ ہمیں ایک بزوکا (یعنی دھماکہ خیز آلہ) سے چھری سے مقابلہ کرتے رہنا ہو گا۔‘

    انھوں نے گرجا گھروں میں جانے والے سے فاصلہ برقرار رکھنے اور ماسک پہننے کی درخواست کی اور پادریوں اور گلوکاروں سے کہا کہ وہ تقریبات کے دوران اپنے چہروں پر پلاسٹک شیلڈ پہنیں۔

  18. گلگت بلتستان میں کورونا وائرس سے ہلاک ہونے والے ڈاکٹرز کی تعداد دو ہو گئی

    محکمہ صحت گلگت بلستان کے مطابق گلگت بلتستان میں ایک اور ڈاکٹر، ڈاکٹر زمان کورونا سے ہلاک ہو گئے ہیں۔

    گلگت میں قائم کورونا مریضوں کے لیے محمد آباد کورونا ہسپتال انتظامیہ کے مطابق ڈاکٹر زمان سٹی ہسپتال گلگت میں بحیثیت ڈینٹل سرجن خدمات سرانجام دے رہے تھے کہ کچھ دن پہلے ان کی طبیعت ناساز ہوئی۔

    علامات کی بنا پر ان کا چیک اپ ہوا تو وہ کورونا پازیٹو تھے۔ محمد آباد کورونا ہسپتال کی انتطامیہ کے مطابق ان کو چند دن قبل ہسپتال منتقل کیا گیا تھا۔

    دو دن قبل ان کو وینٹیلیڑ پر منتقل کیا گیا تھا جبکہ آج شام ان کو سی ایم ایچ گلگت منتقل کردیا گیا تھا جہاں وہ انتقال کر گئے۔

    واضح رہے کہ گلگت بلتستان میں ہلاک ہونے والے یہ دوسرے ڈاکٹر ہیں۔

  19. آسٹریا آنا ہے تو سوٹ کیس کے ساتھ اپنی ’عقل لانا نہ بھولیں‘

    آسٹریا

    آسٹریا نے کورونا وائرس کی وبا کی وجہ سے اٹلی کے ساتھ اپنی سرحد کئی ہفتے بند رکھنے کے بعد اب دوبارہ کھول دی ہے لیکن اٹلی کے سب سے زیادہ متاثرہ علاقے لومبارڈی کے متعلق مسافروں کو وارننگ جاری کی جائے گی۔

    دوسرے یورپی ممالک پر کوئی پابندیاں نہیں ہوں گی۔ آسٹریا نے سیاحت کو دوبارہ فروغ دینے کے لیے پہلے ہی جرمنی، سوئٹزرلینڈ، لیچنسٹائن، سلواکیا، سلوینیا، ہنگری اور چیک ریپبلک کے ساتھ اپنی سرحدیں کھولی ہوئی ہیں۔

    وزیرِ خارجہ ایلیگزانڈر شیلنبرگ نے مسافروں سے کہا ہے کہ وہ ذمہ داری کا مظاہرہ کریں۔

    انھوں نے ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ ’اگر آپ اپنا سوٹ کیس پیک کر رہے ہیں، تو مہربانی فرما کراپنی عقل کو بھی ساتھ لے جانا نہ بھولیں۔‘