آخری وقت اشاعت:  جمعرات 22 جولائ 2010 ,‭ 20:11 GMT 01:11 PST

ہم جد وجہد ترک نہیں کریں گے: پی کےکے

میڈیا پلئیر

اس مواد کو دیکھنے/سننے کے لیے جاوا سکرپٹ آن اور تازہ ترین فلیش پلیئر نصب ہونا چاہئیے

ونڈوز میڈیا یا ریئل پلیئر میں دیکھیں/سنیں

شمالی عراق کے پہاڑوں میں مقیم کرد شدت پسند تنظیم ’پی کے کے‘ جنگجو کہتے ہیں وہ جد و جہد ترک نہیں کریں گے۔ اس جنگجوگروپ کو ترکی، یورپی یونین اور امریکہ کی جانب سے کالعدم قرار دیا جا چکا ہے۔

واضح رہے کہ یہ تنظیم ترکی کے مشرق میں کردوں کی اکثریت والے علاقوں کو شمالی کردستان بنانے اور کردوں کے لیے زیادہ حقوق کے مطالبے کے ساتھ ساتھ شہریوں پرحملے بند کرنے کا مطالبہ کر رہی ہے۔

’پی کے کے ‘ کے لیڈر مراد کاریلان کا کہنا ہے کہ ہم سب کچھ جمہوری طریقے سے حاصل کرنا چاہتے ہیں تاہم اگر ترک حکومت آمادہ نہ ہوئی تو ہم خود اپنی آزادی کا اعلان کر دیں گے، تاہم ترک حکومت کا کہنا ہے کہ حکومت کودہشت گردوں کے بیانات پر تبصرہ کرنے کی عادت نہیں۔

واضح رہے کہ کرد جنگجو کئی عشروں سے شمالی عراق کے دور افتادہ پہاڑوں سے ترکی پر حملے کرتے رہے ہیں۔ وہ اسے اپنے دفاع اور بقا کی جنگ قرار دیتے ہیں۔

کرد جنگجوؤ ں میں خواتین بھی شامل ہیں۔

ترک حکومت کے خلاف انیس سو چوراسی سے شروع ہونے والی مسلح تحریک میں اب تک دونوں اطراف کے چالیس ہزار افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔

[an error occurred while processing this directive]

BBC navigation

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔