اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

’مداح بھی ملے اور نفرت کرنے والے بھی‘

انیس سو بارہ میں ہندوستان میں مشرقی پنجاب کے ایک قصبے میں گیارہ مئی کو پیدا ہونے والا سعادت حسن، بیس برس کی عمر میں ہی منٹو بن گیا۔

افسانہ نگاری کے مختصر سفر میں منٹو کو دیوانگی کی حد تک چاہنے والے مداح بھی ملے اور شدید نفرت کرنے والے نقاد بھی۔ لیکن اپنے فن میں سعادت حسن منٹو کی دسترس کو دوستوں کے ساتھ ساتھ دشمنوں نے بھی سراہا۔

لاہور سے ہمارے ساتھی عارف وقار کی رپورٹ، جو منٹو کی کہانی پہ مبنی ایک ڈرامے کی صوتی جھلک سے شروع ہو رہی ہے۔