جنوبی جارجیا میں کنگ پینگوئنز کا اجتماع

آخری وقت اشاعت:  بدھ 23 جنوری 2013 ,‭ 08:59 GMT 13:59 PST
  • جنوبی جارجیا کے علاقے کے ساحلوں پر پہنچتے ہی آپ پینگوئن کی اتنی بڑی تعداد دیکھ کر حیران رہ جائیں گے، حد نظر تک آپ کو بس پینگوئن ہی نظر آئیں گے۔
  • کنگ پینگوئن کو انڈے سینے اوربچوں کی پرورش میں تقریبا چودہ ماہ کا عرصہ لگتا ہے، یہ سرد ترین علاقہ ہے اور سردی سے تحفظ کی خاطر پینگوئن کے چوزں کی جلد کے اوپر پروں کی ایک موٹی پرت ہوتی ہے۔
  • بالغ کنگ پینگوئن کے سروں پر پیلے رنگ کے پروں کا ایک امتیازی نشان ہوتا ہے چنانچہ بچوں اور بڑوں کے ایک ساتھ جمع ہونے سے رنگوں کا یہ امتزاج ایک انوکھا منظر بناتا ہے۔
  • ہزاروں کنگ پینگوئن پر مشتمل جُھنڈ پہاڑوں اور میدانی علاقوں میں ایک ساتھ اِس انداز سے چلتے ہیں جیسے چھوٹے چھوٹے تین فٹ کے فوجی ایک ساتھ مارچ کر رہے ہوں۔
  • کنگ پینگوئن اپنے بچوں کے لیے مثالی والدین ہوتے ہیں، ماں باپ میں ایک اگر ان کی حفاظت پر مامور ہوتا ہے تو دوسرا خوراک کی تلاش میں چار سو کلو میٹر تک کا سفر کرتا ہے۔
  • جب بچے تھوڑے بڑے ہوجاتے ہیں تو والدین انہیں دوسرے بچوں کے ساتھ اکیلا چھوڑ کر خوراک کی تلاش میں نکل پڑتے ہیں اور پھر ساحل پر سردیوں میں واپس آتے ہیں، اس دوران بچوں کو مشکل سے ہی کچھ کھانے کو مل پاتا ہے۔
  • ساحل سمندر پر چونکہ لیپرڈ سیل اور اورکاس جیسے کئی ديگر جانور بھی ہوتے ہیں جو پینگوئن کا شکار کرتے ہیں۔ اس کے علاوہ فر والے سیلز بھی ان پینگوئن پر حملہ آور ہو سکتے ہیں اس لیے یہ ان سے بچتے بچاتے زندگی گزارتے ہیں۔
  • فوٹوگرافر ٹونی بیک انٹارکٹک کے آس پاس کے جزائر کی زندگي کو قریب سے دیکھنے کے لیے جنوبی جارجیا کے جزیرے کے دورہ پر تھے جس دوران انہوں نے ان خوبصورت مناظر کو اپنے کیمرے میں قید کیا۔ یہ تمام تصاویر ٹونی بیک اور بارکرافٹ میڈیا کی ہیں۔

ملٹی میڈیا

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔