’ریاست مخالف اور حامی دونوں انتخابات کے خلاف‘

آخری وقت اشاعت:  منگل 12 مارچ 2013 ,‭ 14:59 GMT 19:59 PST

میڈیا پلئیر

پاکستان کے سینئیر صحافی حامد میر کا کہنا ہے کہ بلوچستان میں ریاست مخالف اور ریاست حامی شدت پسند بلوچستان میں انتخابات نہیں ہونے دیں گے۔

سنئیےmp3

اس مواد کو دیکھنے/سننے کے لیے جاوا سکرپٹ آن اور تازہ ترین فلیش پلیئر نصب ہونا چاہئیے

متبادل میڈیا پلیئر چلائیں

کوئٹہ میں ضلعی الیکشن کمشنر کا قتل اور تشدد کے دوسرے واقعات کا آنے والے عام انتخابات پر کیا اثر پڑسکتا ہے اور کیا شورش اور تشدد میں جکڑے ہوئے بلوچستان میں ان حالات میں انتخابات ممکن بھی ہوپائیں گے یا نہیں۔ اس کے لیے ہمارے ساتھی احمد رضا نے اسلام آباد میں صحافی حامد میر سے بات کی جنہوں نے کچھ دن پہلے ہی بلوچستان کا دورہ بھی کیا تھا۔ سب سے پہلے تو ان سے یہ جاننا چاہا کہ انتخابات سے کچھ عرصہ پہلے کوئٹہ کے ضلع الیکشن کمشنر کو قتل کرنے والے کیا پیغام دینا چاہتے ہیں؟

ملٹی میڈیا

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔