جمعہ تین مئی کا سیربین

بدھ یکم مئی کو نشر ہونے والے بی بی سی اردو سروس کے ٹی وی پروگرام سیربین کے چاروں حصے آپ اس صفحے پر دیکھ سکتے ہیں۔ یہ پروگرام ایکسپریس نیوز پر نشر کیا گیا تھا۔

سیربین ہفتے میں تین دن یعنی پیر، بدھ اور جمعے کو پاکستان کے مقامی وقت کے مطابق رات گیارہ بجے ایکسپریس نیوز پر نشر ہوتا ہے۔

سرکاری وکیل چوہدری ذوالفقار علی کا قتل

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

پاکستان ميں صورتحال خواہ کچھ بھي ہو، انتہا پسند اپنے ایجنڈے پر ڈٹے ہوئے ہيں۔ اسلام آباد ميں ایک سرکاری وکیل چوہدری ذوالفقار علی کے قتل نے واضح کر ديا ہے کہ انتہا پسندوں کو روکنا تقريباً ناممکن ہو گيا ہے۔ اسلام آباد میں وکلاء برداری سراپا احتجاج، ليکن يہ بھي شايد بےنتيجہ ہو کيونکہ دو ہفتے قبل ہی دارالحکومت میں دو وکلاء کو نامعلوم افراد نے تشدد کا نشانہ بنایا تھا جس پر بھي کوئي کارروائي نہيں ہو سکي۔ کیا ان واقعات میں وکلاء برداری کے لیے کوئی پیغام چُھپا ہے؟

دیکھیے اسلام آباد سے نامہ نگار ارم عباسی کی رپورٹ۔

اسی حصے میں شامل ہے معروف قانون دان عاصمہ جہانگير سے کی گئی خصوصی بات چیت۔

اس قتل کي تفتيش کي تازہ ترين صورت حال سے آگاہ کرنے کے ليے پروگرام میں براہِ راست شریک ہوئے اسلام آباد سے نامہ نگار شہزاد ملک۔

سب سے آخر میں دیکھیے سوشل میڈیا پر آنے والی آپ کی آراء۔

صوبہ سندھ کے ضلع بدین میں انتخابی مقابلہ

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

دو ہزار دس کے سیلاب کے دوران صوبہ سندھ کا علاقہ بدین مکمل طور پر ڈوب گیا تھا۔ یہاں بہت سے علاقوں میں بحالی کا کام ابھی بھی مکمل نہیں ہوا۔ بدین کی مقامی آبادی کی اکثریت غربت کی لکیر سے نیچے زندگی گزار رہی ہے اور روایتی طور پر پاکستان پیپلز پارٹی کی ووٹر رہی ہے۔ اب جبکہ ملک بھر میں تبدیلی اور کارکردگی کی بنیاد پر ووٹ ڈالنے کی بات ہو رہی ہے، بدین کے عوام تبدیلی کے نعرے سے کس حد تک متاثر دکھائی دیتے ہیں اور گیارہ مئی کو یہاں انتخابی مقابلہ کیسا رہے گا؟

دیکھیے ہماري نامہ نگار شمائلہ جعفری کی رپورٹ۔

اس موضوع پر بات کرنے کے ليے کراچي سے براہ راست موجود تھے عوامي احتساب کميشن برائے سيلاب کے سکندر بروہي۔

سب سے آخر میں دیکھیے آپ کی جانب سے سوشل میڈیا پر آنے والی آپ کی آراء۔

عالمی خبریں، سربجیت کی آخری رسومات، انتخابات کی منفرد نگرانی

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

اس حصے کے شروع میں شامل تھیں عالمی خبریں جن میں سب سے پہلی خبر ہے بھارت سے۔

بھارت کے شہری سربجیت سنگھ کي آج بھارتی ریاست پنجاب میں پورے سرکاری اعزاز کے ساتھ آخري رسومات ادا کر دي گئيں۔سربجيت کو دہشت گردی کے جرم میں پاکستان میں موت کے سزا سنائي گئي تھي اور وہ لاہور کی ایک جیل میں کچھ قیدیوں کے حملے ميں ہلاک ہو گئے تھے۔

دیکھیے دلی سے شکیل اختر کی رپورٹ۔

اس کے بعد شامل ہیں مزید عالمی خبریں جن میں امریکہ کی جانب سے شامی باغیوں کو مسلح کرنے کے منصوبے پر غور کے علاوہ کیلیفورنیا کے علاقے لاس اینجیلس کے شمال میں لگنے والی آگ اور بنگلہ دیش کے دارالحکومت ڈھاکہ سے خبر جہاں حکام کے مطابق پچھلے ہفتے آٹھ منزلہ عمارت کے انہدام سے مرنے والوں کی تعداد 500 سے بھی بڑھ گئی ہے۔

آخر میں دیکھیے کے کیسے پاکستان میں ايک مختلف پيش رفت خاص طور پر سوات میں دیکھنے کو مل رہی ہے، جہاں نوجوان خفیہ نگرانی کے ذریعے انتخابی مہم کے دوان بے قاعدگيوں کو رپورٹ کر رہے ہیں۔

دیکھیے اس سلسلے میں سوات سے نامہ نگار محمود جان بابر کی رپورٹ۔

اسي موضوع پر مزيد بات کرنے کے ليے لاہور سے براہ راست پروگرام میں شریک تھیں ڈيلي ٹائمز سے منسلک صحافي مہر تارڑ۔

’تو پھر چلیں‘ انتخابی سلسلہ

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

کہنے کو پاکستانی پنجاب کا ضلع گجرات بہت زیادہ بڑا نہیں لیکن تاریخی، اقتصادی اور سیاسی اعتبار سے یہ ملک کے چند اہم اضلاع میں سے ہے۔ اس ضلع نے متحدہ ہندوستان کو راجہ پورس کی جرآت، سوہنی ماہیوال کی داستان عشق دی اور پاکستان کو کئی چوٹی کے سیاستداں، جرنیل، صنعت کار اور زمین دار دیے۔ تو پھر آئیے وسعت اللہ خان کے ساتھ یہ والا گجرات دیکھنے چلیں۔۔۔

اسی بارے میں