اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

بدھ آٹھ مئی کا سیربین، حصۂ دوم

انيس سو ستر کے بعد سے ہونے والے تقريباً تمام ہي انتخابات ميں اليکشن مہم کي جان بھٹو خاندان کا کوئي نہ کوئي فرد رہا ہے۔ تاہم اس بار پيپلز پارٹي کے بقول سيکيورٹي خدشات کے باعث بھٹو خاندان کا کوئي فرد جماعت کي انتخابي مہم نہيں چلا رہا ہے۔ اسي تناظر ميں نامہ نگار رياض سہيل نے پيپلز پارٹي کے پارليماني گروپ کے سربراہ مخدوم امين فہيم سے پوچھا کہ بغير کسي بھٹو کے، پيپلز پارٹي کے اليکشن ميں کيا امکانات رہ جاتے ہيں۔

پی پی پی نے طالبان کي دھمکيوں کے بعد سیکورٹی خدشات کی بنا پر بڑے انتخابی جلسے نہیں کیے اور انتخابي مہم زيادہ تر اشتہارات کے ذريعے ہي چلائي۔ پي پي پي کي انتخابي مہم اور ممکنہ نتائج پر مزيد بات کرنے کے ليے پروگرام میں کراچي سے براہ راست شامل تھے بي بي سي کے نامہ نگار شاہ زيب جيلاني

سب سے آخر میں دیکھیے آپ کی جانب سے سوشل میڈیا پر آنے والی آپ کی آراء۔