اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

پیر بیس مئی کا سیربین، حصۂ اول

حالیہ انتخابات میں اکثریت حاصل کرنے والی جماعت کے سربراہ اور متوقع وزیراعظم نواز شریف نے امن و امان کی بحالی اور شدت پسندی کے واقعات پر قابو پانے کے لیے شدت پسندوں کے ساتھ مذاکرات پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی جماعت ان مذاکرات کے بارے میں سنجیدہ ہے۔ يہ بات آج انہوں نے لاہور ميں پارٹي کے منتخب اراکین اسمبلی کے اجلاس کے بعد اپنا پہلا پاليسي بيان ديتے ہوئي کہي ہے۔

پاکستاني رياست اور شدت پسند کئي برسوں سے ايک دوسے سے بر سرِ پيکار ہيں۔ کيا اب يہ مذاکرات ممکن ہو سکیں گے۔

اس کا جائزہ لیا ہے نامہ نگار ہارون رشيد نے اپنی رپورٹ میں۔

اِسي موضوع پر مسلم ليگ نواز کے رہنما خواجہ سعد رفيق سےکی گئی خصوصی گفتگو اس حصے میں پیش ہے۔

سب سے آخر میں آپ کی جانب سے سوشل میڈیا پر آنے والی آرا شامل ہیں۔