اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

پیر بیس مئی کا سیربین، حصۂ سوم

زیادہ تر قبائیلی معاشروں میں عورت کی تقدیر کا فیصلہ مرد ہی کرتے ہیں اور یہی وہ معاملہ ہے جو اس وقت ان معاشروں میں موجود پڑھے لکھے لوگوں اوربعض جگہوں پرخود ان عورتوں کے لئے قابل قبول نہیں رہا، خیبرپختونخوا کے ضلع سوات میں عورتوں نے پختون معاشرے کا پہلا خواتين جرگہ بنايا ہے وہ کہتي ہيں کہ وہ معاشرے سے اب خود ہی اپنا حق لیں گي۔

دیکھیے سوات سے محمود جان بابرکی رپورٹ۔

حاليہ انتخابات ميں خيبر پختونخواہ کے ضلعے دير کے کچھ حلقے ايسے ہيں جہاں عورت کو ووٹ کا حق نہيں مل سکا جس کي وجہ ان علاقوں ميں خواتين کے ووٹ نہ ڈالنے کے بارے ميں سياسي جماعتوں کا ايک معاہدہ ہے۔ اسي تناظر ميں پاکستان تحريک انصاف کي رہنما نسيم حيات سےکی گئی گفتگو اس حصے میں شامل ہے۔