اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

دہشت گردی سے نمٹنے کے لیے مذاکرات

اسلام آباد میں منعقد ہونے والی کل جماعتی کانفرنس کے اختتام پر جاری ہونے والے اعلامیہ میں دہشت گردی سے نمٹنے کے لیے مذاکرات کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

وزیر اعظم نواز شریف کی سربراہی میں ہونے والی اس کانفرنس میں ملک کی سیاسی قیادت کے ساتھ ساتھ فوجی قیادت نے بھی شرکت کی ۔کانفرنس کے اعلامیے میں کہا گیا کہ امن کو موقع دینے کے رہنما اصول کے مطابق حکومت قبائلی علاقوں میں اپنے لوگوں سے مذاکرات کا طریقہ کار اور ثالث نامزدکرے گی ۔ مشترکہ قرارداد میں مزید کہا گیا ہے کہ حکومتِ پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ کے طریقہ کار اور وسائل کا فیصلہ خود کرے گی اور امریکہ سمیت کسی بھی ملک سے اس ضمن میں ڈکٹیشن نہیں لی جائے گی۔

اس سلسلے میں پہلے ہونے والی کوششوں کی ناکامی کی وجوہات کیا رہیں اور آج کی کانفرنس ماضی سے کس طرح مختلف ہے ،اسی کا احاطہ کر رہی ہیں اسلام آباد سے ارم عباسی