اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

پشاور حملے: کیا پالیسی میں تبدیلی آئے گی؟

پاکستان میں ابھی حال ہی میں ایک میجر جنرل اور ایک لیفنٹنٹ کرنل ایک ہی بارودی سرنگ کے دھماکے میں حلاک ہوئے۔ طالبان نے ہلاکتوں کی ذمہ داری قبول کی۔ فوج کے اتنے بڑے افسر کے ہلاک ہونے پر بھی حکومت اور فوج نے شدت پسندوں کے خلاف بڑی کارروائی کرنے یا ان کے نام لے کر ان کی مذمت کرنے سے بھی گریز کیا۔

کیا پشاور میں چرچ پر حملے کے بعد پالیسی میں تبدیلی کا امکان نظر آتا ہے؟

اس بارے میں بی بی سی ارود کی نصرت جہاں کی سکیورٹی امور کے ماہر اور تجزیہ کار بریگیڈیئر ریٹائرڈ سعد محمود کے ساتھ گفتگو سنیے۔