اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

’عرفات طبعی موت نہیں مرے‘

ياسر عرفات کي موت قدرتي وجوہات سے نہيں ہوئي۔ ان کي موت کي تفتيش کے ليے بنائي گئي ايک فلسطيني کميٹي اس نتيجے پر پہنچي ہے۔ رمللہ ميں ايک پريس کانفرنس سے بات کرتے ہوئے فلسطيني حکام نے کہا کہ دو ہزار چار ميں ہونے والي ياسر عرفات کي موت کا ملزم صرف اسرائيل ہے۔ فلسطيني حکام کا يہ دعوي سوِس سائنس دانوں کي اس رپورٹ پر مبني ہے جس کے مطابق ياسر عرفات کے جسم سے تابکاري مواد پولونيم کي زيادہ مقدار پائي گئي۔ اسرائيل نے تمام الزامات کي ترديد کي ہے۔ بي بي سي کي مشترقِ وسطي کي نامہ نگار يولينڈ نيل کي رپورٹ