بگرام
اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

بگرام میں پاکستانی قیدیوں کا مستقبل غیر واضح

اس خطے میں تقریباً بارہ برس تک دہشتگردی کے خلاف جنگ لڑنے کے بعد اب اتحادی فوجیں واپسی کی تیاری میں ہیں۔ بہت سے معاملات اب طے کیے جا رہے ہیں۔ پاکستان کے آرمی چیف جنرل راحیل شریف کابل میں اپنے افغان ہم منصب اور نیٹو کے اعلیٰ فوجی اہلکار سے ملاقات کر رہے ہیں۔

ملاقات میں کیا کیا موضوعات زیرِ بحث آئیں گے اس کی تفصیلات تو سامنے نہیں آئیں لیکن امریکیوں کی جانب سے بگرام میں قید کیے گئے 24 پاکستانی قیدیوں کا مستقبل ابھی بھی واضح نہیں۔ جوں جوں امریکہ کے افغانستان سے انخلا کا وقت قریب آ رہا ہے قیدیوں کے خاندانوں کے تشویش میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔کابل میں امریکی سفارتخانے کے ترجمان کا کہنا ہے کہ ان قیدیوں کی واپسی کے لیے مناسب راستہ تلاش کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے اور اس مقصد کے لیے انسانی ہمدری کے پہلو کو سامنے رکھا جائے گا۔ شمائلہ جعفری کی رپورٹ