اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

قانون عام آدمی اور دہشتگروں میں تفريق کرتا ہے؟

پاکستان کی قومی اسمبلی نے ملک میں دہشت گردی سے نمٹنے کے سلسلے میں نیا قانون، پروٹیکشن آف پاکستان یا تحفظ پاکستان بِل دو ہزار چودہ کثرتِ رائے سے منظور کر لیا ہے۔ یہ بِل دو سال کے لیے نافذُ العمل ہو گا۔ اِس قانون کو اصل مسودے ميں اکیس ترامیم کے بعد منظور کيا گیا۔ جماعت اسلامي نے اِس بل کي مخلفت کي جبکہ تحريک انصاف نے رائے شماري ميں حصہ نہيں ليا۔ ارم عباسی کي رپورٹ